اکادمی ادبیات کا حکیم عصمت اللہ کے انتقال پر اظہارافسوس

اکادمی ادبیات کا حکیم عصمت اللہ کے انتقال پر اظہارافسوس

  



کراچی(اسٹاف رپورٹر) اکادمی ادبیات پاکستان کے چیئرمین ڈاکٹر محمدیوسف خشک اور سندھ کے ریزیڈنٹ ڈائریکٹر قادربخش سومرو نے معروف شاعر، ادیب اور حکیم عصمت اللہ سپرلی خیل کی وفات پر گہرے رنج و غم کا اظہار کیا ہے اکادمی ادبیات پاکستان کے چیئرمین ڈاکٹر محمدیوسف خشک نے کہا کہ علاقے میں صرف ایک شاعر کے طور پر نہیں بلکہ عوامی و سماجی شخصیت میں بھی ان کا بڑا نام تھا اس لئے معاشرے کے ہر مکتبہ فکر کے لوگ ان کو قدر کی نگاہ دیکھاکرتے تھے معروف شاعر عصمت اللہ سپرلی خیل کتابوں کے مصنف تھے جن میں زیر ائی مے درباندے۔ سپرلی خیل پیغام اور زلفے پہ گریوان شمال ہیں۔ وہ ہمارے ملک کے بہت بڑے سرمایہ تھے ان کے انتقال سے ادبی خال پُر کرنے میں بہت وقت لگے گا۔ ان کی ادبی خدمات ہمیشہ یاد رکھی جائیں گی۔ دوسری جانب اکادمی ادبیا ت پاکستان کراچی کے آفیس میں مرحوم کے لئے دعائے مغفرت کرائی گئی جس میں کثیر تعداد میں ادیبوں اور شاعروں نے شرکت کی۔اس موقع پر قادربخش سومر ونے کہا کہ اکادمی ادبیات پاکستان کراچی مرحوم کے لواحقین کے ساتھ غم میں برابر کی شریک ہے اورحکیم عصمت اللہ سپرلی خیل کی وفات پرگہرے رنج و غم کااظہار کیا اور مرحوم کی بلندی درجات کی دعاکی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر