’2 ایم این اے ووٹ دینے پر تیار نہیں ہو رہے تھے، انہیں ایجنسیوں نے 4 گھنٹوں کیلئے کنٹینر میں بند کردیا اور پھر ۔۔۔‘

’2 ایم این اے ووٹ دینے پر تیار نہیں ہو رہے تھے، انہیں ایجنسیوں نے 4 گھنٹوں ...
’2 ایم این اے ووٹ دینے پر تیار نہیں ہو رہے تھے، انہیں ایجنسیوں نے 4 گھنٹوں کیلئے کنٹینر میں بند کردیا اور پھر ۔۔۔‘
سورس:   Screen Grab

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)  مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کا کہنا ہے کہ عمران خان کو دو اراکین قومی اسمبلی اعتماد کا ووٹ نہیں دینا چاہتے تھے ، انہیں ایجنسیوں نے زبردستی ووٹ دینے پر مجبور کیا۔

مسلم لیگ ن کے مشاورتی اجلاس کے بعد میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے مریم نواز نے وزیر اعظم عمران خان کو ایجنسیوں کا لے پالک  بیٹا قرار دیا اور کہا کہ کل  اس کیلئے میدان خالی چھوڑا گیا۔ دو ایم این ایز ووٹ نہیں دینا چاہتے تھے، انہیں گولڑہ کے ادارے کے ایک کمپاؤنڈ میں لے جا کر چار گھنٹے تک ایک کنٹینر میں بند رکھ کر مجبور کیا گیا   کہ وہ عمران خان کو ووٹ دیں۔

مریم نواز نے سوال اٹھایا کہ کیا ایجنسیز اس لیے رہ گئی ہیں، کیا ان کا یہی کردار ہوگا، کیا عوام کے مجرم کو بچانے کیلئے آپ اپنے ادارے کو سیاست میں جھونک دیں گے، اس کا جواب انہیں عوام کو دینا پڑے گا۔ ’کہاں ہے اس شخص کی عزت جو کہنے کو تو وزیر اعظم کی کرسی پر بیٹھا ہے لیکن ایجنسیز کو یہ کہتا ہے کہ میرے ارکان سے زبردستی ووٹ لا کر دو۔‘

مزید :

قومی -