دربار فرید پر عبادات پر پابندیوں کے خلاف ایس کیو آئی کا احتجاج جاری

دربار فرید پر عبادات پر پابندیوں کے خلاف ایس کیو آئی کا احتجاج جاری

مٹھن کوٹ (نمائندہ خصوصی) سرائیکستان قومی اتحاد کے زیر اہتمام دربار فریدؒ پرعبادات پر پابندیوں کیخلاف احتجاج مسلسل 43ویں ہفتے میں داخل ایس کیو آئی کے سربراہ خواجہ غلام فرید(بقیہ نمبر17صفحہ12پر )

کوریجہ کی قیادت میں سرخ پٹیاں باندھ کر دھرنا دیا گیا پنجاب حکومت کیخلاف شدید نعرے بازی اور ہزاروں افراد کی شرکت ۔ دربار فریدؒ کے ساتھ ملحق پارک کو سرائیکی یا خواجہ فریدؒ پارک کے نام سے منسوب کرنے اور راجن پور وکلاء کی ہڑتال اور کچہری مسجد کھولنے کے حق میں قرار داد منظور ۔ایس کیو آئی کے سربراہ خواجہ غلام فرید کوریجہ نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دربار فریدؒ پر پابندیاں آئین پاکستان کی توہین ہے سپریم کورٹ اور ہائیکورٹ نوٹس لیں خواجہ فریدؒ کی وقف پراپرٹی کے تاریخی پاک کو کسی دوسرے نام سے منسوب کرنے کی کوشش کی گئی تو خطرناک نتائج برآمد ہوں گے۔ دھرنے سے ضلعی صدر ایس کیو آئی محمد بخش براٹھا ،منظور حسین جتوئی ،الطاف لاکھا ،مجاہد گوپانگ ،ناصر سومرو نے بھی خطاب کیا اس دھرنے میں جام غلام نبی براٹھا ،رمضان ڈلو،محمد علی مزاری ،خادم حسین مہا، یٰسین دریشک ،عبدالغفور مہر سمیت ہزاروں افراد نے شرکت کی ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر