سکھرمیں وزیراعظم کے دو گھنٹے قوم کو 2 کروڑ میں پڑے

سکھرمیں وزیراعظم کے دو گھنٹے قوم کو 2 کروڑ میں پڑے
سکھرمیں وزیراعظم کے دو گھنٹے قوم کو 2 کروڑ میں پڑے

  

سکھر (ویب ڈیسک) وزیراعظم نواز شریف کی سکھر آمد پر انتظامیہ نے ایسی آﺅ بھگت کی کہ بڑے بڑے شہروں کی مہمان نوازی کو پیچھے چھوڑ دیا۔ یہ انتظامات شاہی تو نہ تھے، لیکن شاہی سے کچھ کم نہ تھے۔ دو گھنٹوں میں دو کروڑ صرف ہو گئے۔ ایک ٹی وی کے مطابق جمعہ کی دوپہر سکھر میں درجہ حرارت 41 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا۔ وزیراعظم کی سکھر آمد پر شاہی استقبال اور ٹھنڈا ٹھار خیمہ تیار کرنے کیلئے ٹھیکہ کراچی میں دیا گیا ۔ اڑھائی سو سے تین سو مزدوروں کی ٹیم تین دن اور تین راتیں مسلسل کام کرتی رہی۔ دس ہیوی اے سی پلانٹس نصب کیے گئے اور دس جنریٹر پہنچائے گئے ۔ گرمی سے بچنے کیلئے تقریباً پچاس لاکھ روپے خرچ ہوئے ۔ دو ہزار افراد کیلئے شاندار پنڈال کی لاگت تقریباً 75 لاکھ روپے آئی۔ دو سو کے وی اے کا ٹرانسفارمر بھی ویران میں نصب کیا ۔ بجلی کی سپلائی کیلئے چارپول بھی نصب کیے گئے ۔ بجلی کی مد میں تقریباً پندرہ لاکھ روپے کے اخراجات آئے ۔ ظہرانے پر خرچہ تقریباً پچیس لاکھ روپے آیا۔ بڑی بڑی سکرینیں ، سٹیج پر ٹھنڈی ہوا کیلئے بیس سے زائد پاور سپلٹ ، برقی قمقموں اور دیگر اخراجات کی مد میں تقریباً بیس لاکھ روپے خرچ کیے گئے۔ وزیراعظم نواز شریف نے میزبانوں کو دو گھنٹے سے بھی کم وقت خدمت کا موقع دیا۔ یوں دو گھنٹوں کی مہمان نوازی دو کروڑ روپے کا جھٹکا دے گئی۔ وزیراعظم سکھر سے بذریعہ سڑک روہڑی روانہ ہوئے تو 45 سے زائد گاڑیوں کا ہٹو بچو لشکر ساتھ تھا۔ مختلف اضلاع کے 5 ہزار پولیس اہلکاروں کو یہاں ڈیوٹی پر تعینات کیا گیا جبکہ وزیراعظم کی آمد سے روانگی تک قومی شاہراہ پر پہیہ جام رہا۔

مزید : سکھر