اورنج لائن میٹرو ٹرین پراجیکٹ میں بدعنوانی پر سابق جونیئر انجینئراینٹی کرپشن کے حوالے

اورنج لائن میٹرو ٹرین پراجیکٹ میں بدعنوانی پر سابق جونیئر انجینئراینٹی ...

لاہور(نامہ نگار) ضلع کچہری کے جوڈیشل مجسٹریٹ نے اورنج لائن میٹرو ٹرین پراجیکٹ کی کرپشن میں ملوث ملزم سابق جونیئر انجینئر نیسپاک کو 8مئی تک اینٹی کرپشن کی تحویل میں دے دیا۔جو ڈیشل مجسٹریٹ امتیاز باجوہ کی عدالت میں محکمہ اینٹی کرپشن نے ملزم واحیل افتخار کو گرفتار کر کے پیش کیا، مقدمہ کے تفتیشی افسر نے عدالت کو بتایا کہ ملزم کے خلاف چیف انجینئر ایل ڈی اے اسرار سعید کی درخواست پر مقدمہ درج کیا گیا ہے،ملزم نے افسروں اور مقبول کالسن کمپنی کی ملی بھگت سے کروڑوں روپے کی کرپشن کی، تفتیشی افسر نے عدالت کو مزید آگاہ کیا کہ میٹرو ٹرین کے پلرز کی گہرائی ساڑھے سولہ میٹر رکھنے کا معاہدہ تھالیکن ملزم نے افسروں اور ٹھیکیدار مقبول کالسن کمپنی کی ملی بھگت سے میٹرو ٹرین کے پلرز گیارہ میٹر گہرے کھدواکر قومی خزانے کو 2کروڑ 62لاکھ روپے کا نقصان پہنچایا ،ملزم سے مقدمہ کی تفتیش اور کرپشن کی رقم ریکور کرنے کیلئے ملزم واحیل افتخار کا چودہ روزہ جسمانی ریمانڈ دیا جائے، عدالت نے دلائل سننے اور ریکارڈ کا جائزہ لینے کے بعد اورنج لائن میٹرو ٹرین پراجیکٹ کی کرپشن میں ملوث ملزم سابق جونیئر انجینئر نیسپاک کو 8مئی تک اینٹی کرپشن کی تحویل میں دے دیاہے۔

مزید : علاقائی


loading...