پاک افغان محاذآرائی دہلی کابل گٹھ جوڑ کا نتیجہ ہے ، پھر سرحدی خلاف ورزی کی تو بھر پور جواب دینگے ، وزیر دفاع

پاک افغان محاذآرائی دہلی کابل گٹھ جوڑ کا نتیجہ ہے ، پھر سرحدی خلاف ورزی کی تو ...

سیالکوٹ(اے این این) وزیر دفاع خواجہ محمد آصف نے کہا ہے کہ افغانستان اپنے اندرونی حالات سے توجہ ہٹانے کیلئے کارروائیاں کر رہا ہے ، مغربی سرحد پر محاذ آرائی دہلی کابل گٹھ جوڑ کا نتیجہ ہے،۔اگردوبارہ پاکستانی سرحدوں کی خلاف ورزی ہوئی توبھرپورجواب دیاجائے گا ، کوئی ہمارا جانی نقصان کر ے تو بدلہ لینے کا پورا حق رکھتے ہیں ، سرحدی کشیدگی کے باوجود افغانستان کیساتھ امن کی کوششیں جاری رکھیں گے ،خطے میں جاری دہشت گرد کی جنگ اس وقت تک نہیں جیتی جاسکتی جب تک پاکستان اور افغانستان اکٹھے ہوکرنہ لڑیں ۔ سیالکوٹ ٹیکس بار کی تقریب سے خطاب اورمیڈیاسے گفتگو کرتے ہوئے وزیردفاع نے کہا کہ فغانستان اپنے اندرونی حالات سے توجہ ہٹانے کے لیے کارروائیاں کر رہا ہے یہ سلسلہ گزشتہ ڈیڑھ سال سے چل رہا ہے، ہماری کوشش ہے کہ دونوں ممالک میں ہم آہنگی ا ہو لیکن دوسری جانب مثبت جواب نہیں مل رہا،گزشتہ روز کی کارروائی پر افغانستان کو غلطی کا احساس ہوا ہے۔ افغانستان اور پاکستان دہشت گردی کے خلاف جنگ میں فرنٹ لائن سٹیٹ ہیں، ہماری خواہش ہے کہ دہشت گردی کیخلاف جنگ پاکستان اور افغانستان مل کر لڑیں گے، اس جنگ میں ہمیں چین اور روس سمیت دیگر پڑوسی ملکوں کے تعاون کی بھی ضرورت ہے، جب تک افغان حکومت اپنے ملک کے مفاد کو مدنظر نہیں رکھے گی، ہم افغانستان کے ساتھ تعلقات کے فروغ اور تعاون کی کوششوں کو جاری رکھیں گے، اگر ہماری سرحدوں پر مزید کارروائی کی گئی تو بھر پور جواب دے دیں گیکوئی نقصان کرے گا پھر ہم بدلہ لیں گے۔ ہماری سرزمین کی خلاف ورزی ہوئی اور نقصان ہوا تو پھر اس کا خمیازہ بھگتنا پڑے گا۔

وزیر دفاع

مزید : علاقائی


loading...