افریقی تارکین وطن کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے، سربراہ آکسفیم

افریقی تارکین وطن کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے، سربراہ آکسفیم

ڈربن(اے پی پی) افریقی ممالک میں جبر کے فروغ کے نتیجہ میں افریقی تارکین وطن کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے۔ یہ بات برطانوی امدادی ادارے آکسفیم کے سربراہ نے عالمی اقتصادی فورم کے موقع پر کہی ۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ تارکین وطن کی بڑی تعداد میں آمد کے باعث براعظم یورپ کے ممالک میں عدم استحکام کے خطرات بڑھ گئے ہیں۔ ایگزیکٹو ڈائریکٹر آکسفیم ونی بیانیاما کے مطابق افریقی ممالک سے تارکین وطن کی یورپ آمد میں اضافے کی بڑی وجوہات میں افریقی ممالک میں مسلسل کم ہوتی سیاسی آزادیاں اور اظہار رائے پر پابندی ہے۔ اس موقع پر جرمن وزیر خزانہ وولف گانگ شوٹیلے نے کہا کہ افریقی ممالک میں استحکام کے اقدامات نہ کئے گئے تو مستقبل قریب میں یہ صورت حال خطرناک ثابت ہوسکتی ہے۔ جنوبی افریقہ کے صدر جیکب ذوما نے کہا کہ تارکین وطن کا مسئلہ اس وقت دنیا کو درپیش بڑے چیلنجز میں سے ایک ہے۔

مزید : عالمی منظر


loading...