پیپلز پارٹی کو لوڈشیڈنگ کیخلاف احتجاج میں شدت لانیکا فیصلہ مستقبل کی حکمت عملی طے

پیپلز پارٹی کو لوڈشیڈنگ کیخلاف احتجاج میں شدت لانیکا فیصلہ مستقبل کی حکمت ...

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں )پاکستان پیپلز پارٹی نے احتجاج کے ذریعے حکومت پر دباؤ بڑھانے کیساتھ حکومت مخالف اتحاد اور انتخابی تعاون کی حکمت عملی پر بھی کام شروع کر دیا، آصف علی زرداری نے سینئر رہنماؤں کو ہم خیال جماعتوں سے رابطوں کا ٹا سک سونپ دیا ۔ ذرائع کے مطابق سابق صدرو پیپلز پارٹی پارلیمنٹرینز کے سربراہ آصف علی زرداری کی زیر صدارت گزشتہ روز بلاول ہاؤس لاہور میں رہنماؤں کا مشاورتی اجلاس ہوا جس میں لوڈ شیڈنگ کیخلاف احتجاج میں شدت ،حکومت مخالف اتحاد ،انتخابی تعاون اورپارٹی امور سمیت مجموعی صورتحال پر تفصیلی تبادلہ خیال کرنے سمیت مستقبل کیلئے حکمت عملی بھی طے کی گئی ۔ اجلاس میں آصف علی زرداری نے لوڈ شیڈنگ کیخلاف ناصر باغ میں لگائے گئے احتجاجی کیمپ کے کامیاب انعقاد پر بھی رہنماؤں کو شاباش دی جبکہ مستقبل کی حکمت عملی کے تحت قمر زمان کائرہ، منظور وٹو ، سردار لطیف کھوسہ سمیت دیگر رہنماؤں کو حکومت مخالف اتحاد اور مختلف جماعتوں کیساتھ انتخابی تعاون کے حوالے سے رابطوں کا ٹاسک سونپتے ہوئے کہا موجودہ حکمرانوں نے عوام سے کئے گئے وعدے پورے نہیں کئے اور جب ہم نے حکمرانوں کووہ وعدے یاد کرائے تو مشتعل ہوگئے جس پر حیرت ہوئی لیکن ہم حکمرانوں کووعدے یاد کراتے رہیں گے، ہمارا جینا مرنا عوام کیساتھ ہے ،لوڈشیڈنگ کیخلاف ملک بھر میں احتجاج کریں گے،حکمران مشکلات میں پھنس چکے ہیں اور یہ لاکھ کوششیں کر لیں اب بچ نہیں پائیں گے،کیونکہ انکے وعدے و دعوے سب جھوٹے نکلے۔

پیپلز پارٹی فیصلہ

مزید : صفحہ اول


loading...