نوشہرہ ،زکواۃ کی غیر منصفانہ تقسیم کیخلاف دھرنے کا اعلان

نوشہرہ ،زکواۃ کی غیر منصفانہ تقسیم کیخلاف دھرنے کا اعلان

نوشہرہ(بیورورپورٹ)ولئی یونین کونسل میں زکواۃ کی غیرمنصفانہ تقسیم کے خلاف بلدیاتی نمائندوں نے وزیراعلیٰ ہاؤس کے سامنے دھرنا دینے اور احتجاج کا اعلان کردیا مستحقین کوچھ ہزار روپے کی بجائے پانچ سو اور ایک ہزار روپے پر ٹرخادیاگیا مقامی زکواۃ کمیٹی کو فوری طورپر ختم کرکے غیرجانبدار کمیٹی بنانے کامطالبہ وزیراعلیٰ کے پی کے، وزیر زکواۃ اور ضلع ناظم فوری طورپر اس غیرمنصفانہ تقسیم پر فوری نوٹس لے کر کاروائی کریں اس سلسلے میں ولئی یونین کونسل کے بلدیاتی نمائندوں عظیم خان، امتیاز علی شاہ احسان علی اور لیڈی کونسلروں اور علاقہ گل آباد ،پیران، اباخیل کے عمائدین کا مشترکہ احتجاجی اجلاس منعقد ہوا بلدیاتی نمائندوں اور علاقہ عمائدین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ویلج کونسل ولئی کیلئے 21 مستحقین کیلئے چھ ہزار روپے فی مستحق کے حساب سے مقامی زکواۃ کمیٹی کو 1 لاکھ 26 ہزار کا فنڈ دیاگیا تھا لیکن مقامی زکواۃ کمیٹی کے اراکین نے اقرباء پروری سے کام لیتے ہوئے مستحقین کو پانچ سو روپے اور ایک ہزار روپے فی چیک پر ٹرخادیا اور باقی ماندہ رقوم اپنے رشتہ داروں، منظور نظرافراد میں تقسیم کردی اس فنڈ سے مقامی بلدیاتی نمائندوں کو بھی بے خبر رکھاگیا جس پر مقامی بلدیاتی نمائندے سراپا احتجاج بن گئے بلدیاتی نمائندوں اور عمائدین علاقہ نے وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خان خٹک، صوبائی وزیر عشر وزکواۃحبیب الرحمن ، ضلع ناظم نوشہرہ لیاقت خان خٹک سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ وہ ولئی میں کرپٹ مقامی زکواۃ کمیٹی کا زکواۃ مستحقین کو نظرانداز کرنے اور منظور نظر و من پسند غیرمستحق افراد کو نوازنے کے خلاف کاروائی کرکے ولئی کی مقامی زکواۃ کمیٹی کے اراکین کو برطرف کرکے علاقے کے عمائدین کی مشاورت سے از سرنو مقامی زکواۃ کمیٹی تشکیل دی جائے بصورت دیگر ہم وزیراعلیٰ ہاؤس کے سامنے دھرنا دیں گے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...