تھرفاؤنڈیشن نے آتشزدگی سے متاثرہ 176گھردوبارہ تعمیر کردیئے

تھرفاؤنڈیشن نے آتشزدگی سے متاثرہ 176گھردوبارہ تعمیر کردیئے

کراچی (پ ر) ضلع تھر پارکر کے گاؤں اوڈانی میں آگ کی تباہ کاریوں کے بعد تھر فاؤنڈیشن کی جانب سے صرف 20 دن میں 176 گھروں کی بحالی کے لیے 256 جھگیاں قائم کر کے منصوبے کو کامیابی کے ساتھ مکمل کیا اور متاثرین کو ان کے گھروں میں واپس منتقل کر دیا۔گھروں کی بحالی کے ساتھ ساتھ متاثرین کو ایک مہینے کا راشن، غیر غذائی اشیاء مثلاً بستر، باورچی خانے کا سامان، چھوٹی چارپائیاں اور دیگر ضروری گھریلو اشیاء بھی فراہم کی گئیں۔یہ منصوبہ کل 12.6 ملین روپے کی لاگت کے ساتھ مکمل ہوا جسے تھر فاؤنڈیشن کی چھتری تلے سندھ اینگرو کول مائننگ کمپنی (SECMC) اور اینگرو پاورجن تھر لمیٹیڈ ( EPTL) نے مشترکہ طور پر تکمیل تک پہنچایا۔ضلع تھر پارکر کی تحصیل چھاچھڑو کا گاؤں اوڈانی غیر متوقع طور پر آگ کی لپیٹ میں آ گیا اور صرف 20 منٹ کے مختصر وقفے میں 173 گھروں کی 256 جھگیاں تباہ ہو گئیں۔ متاثرین کے پاس صرف پہنے ہوئے کپڑے ہی باقی رہ گئے۔ SECMC اور EPTL کی ٹیم بچاؤ اور امدادی سرگرمیوں کے لیے فوری طور پر گاؤں پہنچ گئی اور گاؤں والوں کو اشیائے خورد و نوش فراہم کیں اور چندہ اکٹھا کر کے گاؤں کی بحالی کا فیصلہ کیا۔اگلے روز اوڈانی میں افتتاحی تقریب منعقد کی گئی جس میں اینگرو کارپوریشن کے صدر غیاث خان نے بحیثیت مہمانِ خصوصی شرکت کی۔ چیف ایگزیکٹو آفیسر (CEO) شمس الدین شیخ، SECMC کے COO ابو الفضل رضوی اور EPTL کے چیف ایگزیکٹو آفیسر احسن ظفر سید نے بھی شرکت کی۔اس موقع سے قبل غیاث خان نے بحال کی گئی ازسرنو تعمیر کی گئی جھگیوں اور گھروں کا جائزہ لینے کے لیے گاؤں کا دورہ کیا۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کاموں پر اطمینان کا اظہار کیا اور سندھ اینگرو تھر کی پوری ٹیم کو ان کے عزم و حوصلے اور سخت محنت پر اور منصوبے کو 20 دنوں میں پایہ تکمیل تک پہنچانے پر مبارکباد پیش کی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...