ٹریفک کے مختلف حادثات و واقعات میں لڑکی سمیت 8افراد جاں بحق

ٹریفک کے مختلف حادثات و واقعات میں لڑکی سمیت 8افراد جاں بحق

گگومنڈی ، بوریوالا ، چوک سرور شہید ، کوٹ ادو،کہروڑ پکا ، فتح پور ، بنگلہ منٹھار ، حاصل پور (نمائندگان)تھریشر مشین اورٹریکٹر ٹرالی کی زد میں آکر2افراد جاں بحق ٹریفک کے دیگر حادثات میں لڑکی سمیت 6افراد دم توڑ گئے مختلف وجوہات کی بنیاد پر 2خواتین نے خود کشی کرلی اس سلسلے میں گگومنڈی،بیورالا ،تحصیل رپورٹرکے مطابق مختلف مقا ما ت پر تھر یشر مشین اور ٹریکٹر ٹرالی کی زد میں آکر دو افراد جاں بحق ہو گئے مشتعل افراد کا ٹریکٹر ڈرا ئیور اور ہیلپر پر تشدد ۔تفصیلا ت کے مطابق نو احی گا ؤ ں 363ای بی کا بیس سالہ محنت کش یا سر علی تھر یشر مشین پر مز دوری کر رہا تھا کہ اچانک پا ؤ ں پھسلنے کی وجہسے مشین کے ٹا پا میں گر گیا اور مو قع پر ہی ہلا ک ہو گیا دوسر ے واقع میں چکنمبر245ای بی میں ٹریکٹر ڈرا ئیور محسن جو ئیہ ٹر یکٹر ٹرالی بیک کر رہا تھاکہ مبینہ طور پر ٹرالی کے عقب میں کھڑا 70سالہ محمد شریف ٹرالی کے نیچے آگیا اور مو قع پر ہی ہلا ک ہو گیا ۔محمد شریف کی ہلا کت پر مشتعل اہلیا ن دیہہ نے ڈرائیو ر محسن جو ئیہ اور ہیلپر ند یم کو تشددکا نشانہ بنا کر یر غما ل بنا لیا ۔اطلا ع ملنے پر مقا می پولیس نے موقع پر پہنچ کر دیہا تیوں سے چھڑ وا کر زخمی حا لت میں ہسپتال منتقل کر دیا ۔12سالہ محمد شان اپنی ہمشیرہ والدہ اور دیگر رشتہ دار وں کو رکشہ پر چوک سرور شہید سے کریم ٹاؤن لے جا رہا تھا سامنے سے آنیوالے ہارڈویسٹر مشین سے رکشہ ٹکرا گیا ۔ غلط اندازے کی وجہ سے حادثہ پیش آیا ۔ محمد شان رکشہ کوکنٹرول نہ کر سکا ۔ حادثے کے نتیجے میں نو سالہ عظمہ بی بی موقع پر جاں بحق جبکہ شان محمد اسکی والدہ اور ور رشتہ دار شدید زخمی ہو گئے ۔ پولیس نے ہارڈویسٹر مشین کو اپنے قبضے میں لے لیا ۔ تاہم ہارڈویسٹر مشین کا ڈرائیور موقع سے فرار ہو گیا ۔ جبکہ عظمہ بی بی کے ورثاء نے ڈرائیور کو معاف کر دیا اور مزید کاروائی سے دستبردار ہو گئے ۔ نواحی چک نمبر 151ایم ایل کے رہائشی غلام حسین گاڈی کی بیٹی خورشید بی بی کی شادی اپنے رشتہ دار پتی چاکر خان کے رہائشی منیر احمد گاڈی سے ہوئی تھی جس سے خورشید بی بی کے 8بچے تھے ۔ منیر احمد گاڈی نے چند ماہ قبل رضیہ نامی خاتون سے پسند کی دوسری شادی کر لی اور اسے گھر لے آیا جس کا خورشید بی بی کو رنج تھا،اسی رنجش پر منیر گاڈی بیوی خورشید بی بی پر تشدد کرتا تھا ،تشدد اور دوسریی شادی سے دلبرداشتہ خورشید بی بی نے گزشتہ روز کالا پھر پی کر زندگی کا خاتمہ کر دیا۔کہروڑ پکا سے سٹی رپورٹر کے مطابق کہروڑپکا دنیاپور روڈ پر چٹ نہر کے قریب دو موٹرسائیکلزمیں صبح پونے چھ بجے کے قریب تیز رفتاری کے باعث ایک خوفناک تصادم ہوا جس کے نتیجے میں دونوں موٹر سائیکل سوار شدید زخمی ہوگئے جنہیں پٹرولنگ والوں نے ایمبولینس کی مدد سے ٹی ایچ کیو ہسپتال دنیاپور پہنچایاذرائع کے مطابق زخموں کی شدت کے پیش نظر کہروڑپکا کا رہائشی الطاف فوت ہوگیا جبکہ اس کی ساتھی خاتون پروین کی ٹانگیں فریکچر ہوئی اسی طرح دوسری موٹر سائیکل پر سوار تین افراد میں سے لائل پور کا رہائشی مشتاق نامی شخص جاں بحق ہوگیا جبکہ اس کے دو ساتھی زخمی ہوئے جنہیں ریفرکردیا گیا۔فتح پورسے سٹی رپورٹر کے مطابقفتح پور(سٹی رپورٹر ) اوورٹیک کرتے ہوئے ٹرک اور کیری ڈبہ میں تصادم ،دوافراد زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جاں بحق ، خاتون اور اس کا بچہ شدید زخمی ، تفصیل کے مطابق مقامی تاجر چوہدری عمیر گزشتہ رات اپنے کیری ڈبہ سے رحیم یار خان سے واپس فتح پور آ رہا تھا کہ اڈا قاضی آباد کے قریب ٹرک کو اوورٹیک کے دوران تصادم ہوگیا ،دو افراد موقع پر ہی جاں بحق ہو گئے جبکہ خاتون اور اس کا بچہ شدید زخمی حالت میں ملتان ریفر کر دیا گیا تھا ،جہاں پر بچے کی حالت سیریس بتائی جاتی ہے۔بنگلہ منٹھار سے نمائندہ پاکستان کے مطابقجنرل کونسلر فاروق ساجد کے چچا چوہدری بشیر احمد ٹریفک حادثہ میں جابحق ہو گئے، چوہدری بشیر احمد تین افراد کے ہمراہ فتح پور کی جانب گاڑی میں سوار ہو کرسفر کر رہے تھے کہ منزل سے پانچ کلومیٹر پہلے گاڑی ٹرک سے جاٹکرائی حادثہ کے نتیجہ میں گاڑی کا ڈرائیور اور چوہدری بشیر موقع پر ہی دم توڈ گئے جبکہ دو مرد اور ایک عورت کو زخمی حالت میں قریبی ہسپتال میں داخل کر وادیاہے،چوہدری بشیر کی ڈیڈ باڈی کو بذریہ ایمبولینس ان کی رہائش گاہ 140پی منٹھار لایا گیا،مرحوم کی نماز جنازہ عصرکی نماز کے بعد اداکردی گئی ۔حاصل پور سے نمائندہ پاکستان کے مطابق چک نمبر 60/61کی رہائشی جیواں مائی جو چار بچوں کی ماں ہے گھریلو ناچاقی سے تنگ آ کر گھر میں پڑی گندم کو محفوظ کرنے والی گولیاں کھا کر اپنی زندگی کا خاتمہ کر لیا جس کو سپرد خاک کیا جا رہا تھا کہ مقتولہ کے والد نے موقع پر پہنچ کر کہا کہ میرے بچی کے سسرال والے میری بچی پر تشدد کرتے تھے جس کی وجہ سے میری بیٹی نے موت کو گلے لگا لیا پولیس نے نعش کو اپنی تحویل میں لے کر اسپتال منتقل کر دیا اور تحقیقات شروع کر دی ہیں ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...