جعلی پیر کی استانی سے 3 سال تک زیادتی ،ویڈیو بنا کر بلیک میلنگ ، خاتون کی چھوٹی بہن بھی اغوا کرلی

جعلی پیر کی استانی سے 3 سال تک زیادتی ،ویڈیو بنا کر بلیک میلنگ ، خاتون کی ...
جعلی پیر کی استانی سے 3 سال تک زیادتی ،ویڈیو بنا کر بلیک میلنگ ، خاتون کی چھوٹی بہن بھی اغوا کرلی

  

حافظ آباد (ویب ڈیسک) جعلی پیر کی سکول ٹیچر کو بلیک میل کر کے لاکھوں روپے بٹورنے کے ساتھ ساتھ 3سال تک زیادتی  , بات یہیں ختم نہیں ہوئی بلکہ زیارات کے بہانے سکول ٹیچر کی چھوٹی بہن کو لیکر فرار ہوگیا، ملزم اس سے پہلے 4 شادیاں رچا چکا۔ ڈی پی او کے حکم پر مقدمہ درج ہوا مگر سٹی پولیس مقدمہ کے اندراج کے 17 دن بعد بھی ملزم کو گرفتار نہ کر سکی ۔

روزنامہ خبریں کے مطابق (س) سکنہ ٹھٹھہ کھوکھراں حافظ آباد نے بتایا کہ وہ پرائیویٹ سکول ٹیچر ہے، 3 سال قبل سید ظہیر عباس عرف ننھے شاہ سے  محرم الحرام میں ملاقات ہوئی تو اس نے خود کو بڑا کامل پیر بتایا تو وہ اس کے گھر گئی تو وہ اس کے اپنے مخصوص حجرہ میں لے گیا جہاں کافی زیارات اور تصاویر آویزاں کی ہوئی تھیں جس سے وہ متاثرہوئی تو جعلی پیر نے تابوت پر ہاتھ رکھ کر کہا کہ تمہارے ہاں بیٹا پیدا ہوگا آپکو شیرینی دینی ہوگی وہ جب دوبارہ پیر کے آستانہ پر گئی تو اس نے تعویذ دیئے اور اس سے 25ہزار روپے لیے اور اسکے ساتھ شیطانی کھیل شروع کر دیا اور اپنی ہوس پوری کرتا رہا اسی دوران خفیہ طریقہ سے تصاویر بنالیں۔ اس کے ہاں بیٹا پیدا ہوا مگر فوت ہوگیا۔ ایک سال بعد دوبارہ بیٹا پیدا ہوا تو جعلی پیر نے کہا کہ یہ اس کی دعا سے پیدا ہوا ، اس کا نام غلام عباس رکھو اور   شیطانی کھیل کھیلتا رہا جب وہ انکار کرتی تو کہتا کہ تمہاری تصاویر سب کو دکھائے گا اور جو بچہ اس کی دعا سے پیدا ہوا ہے وہ بھی مرجائے گا۔ اسطرح اس سے رقم بھی بٹورتا اور اپنی ہوس بھی پوری کرتا ، اسی طرح بلیک میل کر کے اس سے 10تولے کے زیورات بھی لئے ، جب وہ اپنی تصاویر کی واپسی کا مطالبہ کرتی تو مزید رقم بٹورتا اور اپنی ہوس پوری کرتا۔

ننھے شاہ 3 سال سے بلیک میل کر کے اس کو اپنی ہوس کا نشانہ بنا رہا ہے اس دوران پیر ظہیر شاہ کااس کے والدین کے گھر کافی آنا جانا ہوگیا تو ظہیر شاہ عرف ننھے شاہ نے کہا کہ آپ کو زیارات پر لے جاتا ہوں۔ زیارات کے نام پر 4لاکھ روپے لئے اور بقایا کیلئے 8/9دن کا وعدہ کیا اسی دوران ننھے شاہ ان کے گھر آیا تو کہا کہ اس کی بہن یاسمین اور ضعیف والد کا زیارات کیلئے میڈیکل کروانا ہے۔ میڈیکل کروانے کے بہانے گاڑی میں بٹھا کر اس کی بہن یاسمین اور والد کو لے گیا راستہ میں اس کے ضعیف والد عارف کو دھکے دیکر گاڑی سے اتار دیا اور اس کی بہن یاسمین کو اغوا کر کے لے گیا جس کا ابھی کوئی سراغ نہیں ملا وہ ظہیر شاہ عرف ننھے شاہ کے ظلم ستم سہتی رہی مگر اپنی عزت کے خوف سے بلیک میل ہوتی رہی ، (س) کے مطابق جعلی پیر ننھے شاہ نے پہلے بھی 4 شادیاں کی ہوئی ہیں ، ایک مرگئی اور ایک میں علیحدگی ہوئی ہے ، اس کے علاوہ درجنوں لڑکیوں کو ورغلا کر اپنے جال میں پھنسا کر ان کی زندگیاں خراب کر چکا ہے۔ انسان کے روپ میں درندہ ہے۔

متاثرہ (س) کے بھائی مجاہد نے بتایا وقوعہ کے بعد وہ تھانہ سٹی چکر لگاتے رہے مگر ان کا مقدمہ درج نہ ہوا تو وہ ڈی او حافظ آباد کے پاس پیش ہوئے تو ڈی پی او صاحب نے ان کی ظلم بھری داستاں سنی اور ان کے حکم سے 18 اپریل کو زیر دفعہ 420, 376i, 365Bت پ مقدمہ درج ہوا مگر اس کے بعد پولیس نے ملزمان کو گرفتار نہیں کیا ملزمان دھند ناتے پھر رہے ہیں اور ان کو سنگین نتائج کی دھمکیاں دے رہے ہیں جب مقدمہ کے اندراج کے کافی دن بعد تک ملزمان کو گرفتار نہ کیا گیا تو دوبارہ ڈی پی اوڈاکٹر سردار عیات گل کے سامنے پیش ہوئے تو انہوں نے پولیس تھانہ سٹی کو ملزمان کو گرفتار کرنے کی ہدایت کی اس کے بعد جب وہ تھانہ سٹی آئے تو تفتیشی امجد شاہ مشتعل ہوگیا کہ تم ڈی پی او کے پاس کیا کرنے گئے ہو ملزمان تو انہوں نے ہی پکڑ نے ہے اور دھمکیاں دنیا شروع کردیں مگر تاحال ان کے ملزمان گرفتار نہیں ہوئے۔ پولیس ذرائع کے مطابق ملزم ننھے شاہ نے آج مورخہ 7مئی تک عبوری ضمانت کروائی ہوئی ہے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /حافظ آباد /جرم و انصاف