ٹانک میں جٹاتر کے درجنوں مشران کا نہر پر کام کی بندش کیخلاف مظاہرہ

ٹانک میں جٹاتر کے درجنوں مشران کا نہر پر کام کی بندش کیخلاف مظاہرہ

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 
ٹانک(نمائندہ خصوصی)وارن کےنال پر جاری کام کی بند ش کے خلاف علاقہ جٹاتر کے درجنو ں مشران نے پرےس کلب ٹانک کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کےا احتجاجی مظاہرےن نے پلے کارڈز اٹھارکھے تھے جن پر ٹھےکےدار کی غنڈہ گردی کے خلاف نعرے درج تھے احتجاجی مظاہرےن سے سرائیکی اتحاد کے بانی ملک محمد رمضان شوری، حبیب محسود، ملک امےر کوٹ اللہ داد، ملک سکندر اعظم ،کمانڈر محسود،جمعےت علماءاسلام کے سابق ضلعی جنرل سےکرٹری عباس بلوچ سمےت دےگر مشران نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وارن کےنال سے علاقہ جٹاتر کی حق تلفی کی جارہی ہے ٹانک کے بجائے دےگر اضلاع کو پانی کی سپلائی پچھلے کئی سالوں سے جاری ہے جبکہ ٹانک کے رہائشی پانی کی بوند بوند کو ترس رہے ہیں علاقہ جٹاتر مےں انسان اور جانور ایک ہی جوہڑ کا گنداپانی پےنے پر مجبور ہےں اور ہماری ہزاروں اےکڑ بنجر اراضی وےران پڑی ہے انہوں نے کہاکہ جٹاتر کے علاقوں سے تعلق رکھنے والے زمےن دار وں کے پاس ملکےتی زمےنےں ہےں لےکن پانی نہ ہونے کی وجہ سے وہ مزدورےاں کرنے پر مجبور ہےں مظاہرےن کا کہنا تھا کہ وارن کےنال پر کڑوں روپے لگائے گئے ہےں لےکن جٹاتر کی عوام مذکورہ منصوبہ سے مستفےد نہےں ہو رہے ہےں انہوں نے کہا کہ وارن کےنال کی بندش کے باعث جٹاتر کی عوام در بدر کی ٹھوکرےں کھانے پر مجبور ہےں انہوں نے حکومت اور انتظامےہ سے مطالبہ کےا کہ جس ٹھکےدار نے زبردستی کام بند کےا ہے اس کے خلاف سخت اےکشن لےا جائے اور وارن کےنال کا ٹھےکہ جس ٹھکےدار کے پاس ہے پولےس انتظامےہ اس ٹھکےدار کو تحفظ فراہم کرے تاکہ وارن کےنال پر کام شروع کےا جا سکے ان کا کہنا تھا کہ وارن کےنال کے چالو ہونے سے حلقہ جٹاتر کی عوام کی زندگےاں بدل سکتی ہےں بعد مےں ڈی اےس پی مہر علی شاہ کے ساتھ کامےاب مزاکرات کے بعد احتجاجی مظا ہرےن پر امن طور پر منتشر ہو گئے