مہنگائی کے طوفان نے غریب عوام کے منہ سے نوالہ چھین لیا ، عبدالقدیراعوان

مہنگائی کے طوفان نے غریب عوام کے منہ سے نوالہ چھین لیا ، عبدالقدیراعوان

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

پشاور (سٹی رپورٹر) تنظیم الاخوان پاکستان نے کہا ہے کہ ہم اغیار سے جتنے قرض لے رہے ہیںوہ سود پر مبنی ہیںاورجو ملک بھی قرض دے رہا ہے وہ اپنے مفادات کو سامنے رکھ کر قرضہ دے رہا ہے اور جہا ں سود اس حد تک عام ہوگا تو پھر خوشحالی کیسے ممکن ہو گی جبکہ مہنگائی کے طوفان نے غریب کے منہ سے نوالہ چھین لیا ہے اس وقت متوسط طبقہ کا گزارا کرنا انتہائی مشکل ہو گیا ہے یہ عذابِ الٰہی کی ایک صورت ہے جسے دور کرنے کے لیے ہمیں اجتماعی توبہ کرنی ہوگی کیونکہ عذاب تب ٹلتے ہیں جب ہم اپنے گناہوں کی مغفرت طلب کریں گے ان خیالات کا اظہار امیر عبدالقدیر اعوان نے دو روزہ روحانی اجتماع کے موقع پر خطا ب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہمیں اس وقت اپنے حصے کا کردار اس طرح ادا کرنا ہے کہ کم از کم جس کا جتنا اختیار ہے وہ اس پر عمل کرے کہ سود جیسی لعنت سے بچ جائے جبکہ اپنے فرائض کو ایمانداری سے پورا کرے لین دین میں صاف گوئی کو اختیار کرے اور دوسروں کے حقوق کو ادا کرے کسی کے ساتھ نا انصافی نہ کرے انہوں نے کہا کہ گرتے گرتے ہم اس حد تک پہنچ چکے ہیں کہ قرآن مجید کے احکام پر بھی اعتراض کر رہے ہیں جو کہ اپنے آپ پر بہت بڑا ظلم ہے کیونکہ احکامِ الٰہی اور آپ ﷺ کے بتائے ہوئے اصولوں کا انکار کفر کی طرف دھکیل دیتا ہے ۔