18ویں ترمیم میں پنجابیوں نے قربانی دی ہے،خواجہ سعد رفیق

18ویں ترمیم میں پنجابیوں نے قربانی دی ہے،خواجہ سعد رفیق

  

لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت میں پیشی کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ آئین انسان کا بنایا ہوا قانون ہے اس میں ترمیم کی ضرورت ہو تو بات کی جاسکتی ہے،وہ سمجھتے ہیں کہ آئین میں ترمیم کی اس وقت کوئی ضرورت محسوس نہیں ہو رہی، اٹھارویں ترمیم جب ایوان میں آئے گی تو اس پر بات بھی ہوگی،18ویں ترمیم کے حوالے سے مسلم لیگ (ن)سے کوئی رابطہ نہیں کیا گیا،آئین میں ترمیم ایک دن کا مسئلہ نہیں، 18ویں ترمیم جب ہوئی تویہ کام ایک دن یا مہینے میں نہیں ہوا،18ویں ترمیم میں پنجابیوں نے قربانی دی ہے،پنجاب نے اپنا حصہ چھوٹے صوبوں کو دیا،انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ نیب قوانین میں تبدیلی مسلم لیگ ن کا مسئلہ نہیں،نیب کالا قانون ہے،نیب قانون اور معیشت اکٹھے نہیں چل سکتے۔کاروباری طبقہ نیب قوانین کے تحت جیلوں میں ہے انکی داد رسی ہونی چاہیے،انہوں نے مزیدکہا کہ ہماری چودھری برادران سے ہونے والی ملاقات کسی تبدیلی کا اشارہ نہیں۔

سعد رفیق

مزید :

پشاورصفحہ آخر -