ملاوٹ مافیا کیخلاف مہم تیز‘ متعدد فوڈ پوائنٹس کی چیکنگ‘ نوٹس‘ جرمانے

  ملاوٹ مافیا کیخلاف مہم تیز‘ متعدد فوڈ پوائنٹس کی چیکنگ‘ نوٹس‘ جرمانے

  

ملتان (خصو صی رپورٹر) رمضان المبارک کے دوسرے عشرے میں پنجاب فوڈ اتھارٹی ملاوٹ مافیا کے خلاف متحرک،کھلے ملاوٹی مصالحہ جات کی فروخت پرکریانہ سٹور سربمہر,وبائی صورتحال میں عوام تک صحت بخش خوراک فراہم کرنے کیلئے فوڈسیفٹی ٹیمز کی حفاظتی لباس پہن کر خصوصی ہدایات پر بروشرز تقسیم، تھرمل گنز کی مدد سے فوڈ آپریٹرز کی سکریننگ، جنوبی پنجاب (بقیہ نمبر12صفحہ6پر)

میں 282فوڈ پوائنٹس کی چیکنگ، ایکسپائر اشیاء رکھنے والوں، صفائی کے ناقص نظام کو بہتر کرنے کے لیے250فوڈیونٹس کوبہتری نوٹسزجاری، حفظان صحت کے اصولوں کی خلاف ورزی پر20 فوڈ پوائنٹس کو53,500 روپے کے جرمانے عائد،440کلو غیر معیاری مربہ،372لیٹر ملاوٹی دودھ،29کلو ملاوٹ زدہ مصالحے،85کلو مضرصحت مٹھائی تلف۔ملتان06 مئی: ڈائریکٹر جنرل پنجاب فوڈ اتھارٹی عرفان نواز میمن کی جاری کردہ ہدایات پر عمل کرتے ہوئے فوڈ سیفٹی ٹیموں نے ڈی جی خان میں کاروائی کے دوران ملاوٹی مصالحہ جات کی فروخت پرکریانہ سٹور کو سربمہر کیا گیا۔اس کے علاوہ ملتان، بہاولپور اور ڈیرہ غازی خان کے مختلف اضلاع میں کاروائیاں کرتے ہوئے کورونا وائرس کے متعلق احتیاطی تدابیر پر عمل درآمد کیلئے دوکانوں میں خوراک کو صحت بخش بنانے کیلئے بروشرز تقسیم کیے۔ جنوبی پنجاب بھر میں 282فوڈ پوائنٹس کو وباء سے متعلق ضروری ہدایات جاری کی گئی اورصفائی کی صورتحال بہتر نہ ہونے پر250فوڈیونٹس کو اصلاحی نوٹسز جاری کیے۔اسی طرح حفظان صحت کے اصولوں کی خلاف ورزی کرنے پر 20فوڈ پوائنٹس کو 53ہزار 05سو روپے کے جرمانے عائد کیے گئے اور دوران کاروائی440کلو غیر معیاری مربہ،372لیٹر ملاوٹی دودھ،29کلو ملاوٹ زدہ مصالحے،85کلو مضرصحت مٹھائی موقع پر تلف کی گئی۔ تفصیلات کے مطابق کارونا وائرس کے پیش نظر مکمل احتیاط برتنے،خوراک کو محفوظ رکھنے اورشاپس پر کام کرنیوالے ورکرز کو خطرناک وباء سے بچنے کیلئے ہدایاتی پرچے جاری کیے گئیں۔ ماہ رمضان میں خوراک کی فراہمی کے ساتھ ساتھ غذا کو محفوظ رکھنا بہت ضروری ہے۔ڈی جی خان کی فوڈ سیفٹی ٹیم نے کاروائی کرتے ہوئے یوسف اینڈ بشیر کریانہ سٹور کو سابقہ طور پر دی گئی ہدایات پر عمل نہ کرنے،کھلے ملاوٹی مصالحہ جات،رنگدار ٹافیاں فروخت کرنے،مصالحہ جات کے سیمپل فیل ہونے،لائسنس نہ ہونے،نامناسب سٹوریج کرنے،ناقابل سراغ فوڈ آئٹمزکی موجودگی اور ناقص صفائی پر کریانہ سٹور کو سربمہر کیا گیا۔مزید برآں جنوبی پنجاب کے مختلف اضلاع میں کاروائی کرتے ہوئے ملتان ڈویثرن میں 84فوڈ پوائنٹس کو وزٹ کیا اور77کو وارننگ نوٹسز جاری کیے۔اسی طرح بہاولپورڈویثرن میں 105شاپس کی چیکنگ کی گئی اور100فوڈ پوائنٹس کو اصلاحی نوٹسز جاری کیے جبکہ ڈی جی خان ڈویثرن میں 93شاپس کی چیکنگ کرتے ہوئے73فوڈ پوائنٹس کو معمولی نقائص پر حتمی وارننگ نوٹسز جاری کیے۔چیکنگ کے دوران تمام فوڈ پوائنٹس کوکارونا سے بچاؤ کے لیے مثبت اقدامات اٹھانے اور دوکانوں میں صفائی کی صورتحال کو بہتر بنانے کے لیے ضروری ہدایات دی گئیں۔حفظان صحت کے اصولوں کی خلاف ورزی کرنے پر ملتان ڈویثرن میں 08فوڈ پوائنٹس کو21,000 روپے، بہاولپور ڈویثرن میں 02شاپس کو 5,000روپے اور ڈی جی خان ڈویثرن میں 10فوڈ یونٹس کومجموعی طورپر 27,500روپے کے جرمانے عائد کیے گئے۔اسی طرح دوران کاروائی انسپیکشن کرتے ہوئے 440کلو غیر معیاری مربہ،372لیٹر ملاوٹی دودھ،29کلو ملاوٹ زدہ مصالحے،85کلو مضرصحت مٹھائی موقع پر تلف کی گئی۔فوڈ سیفٹی ٹیموں نے چیکنگ کے دوران ماسک، حفاظتی لباس پہن رکھے تھے، سینٹائزر کے استعمال کو یقینی بنایا گیا۔عوام سے گزارش ہے فوڈ پوائنٹس کو وزٹ کرتے وقت ماسک کا استعمال لازمی کریں۔ عالمی سطح پر بڑھتی ہوئی وباء کو پھیلنے سے روکنے کے لیے دی گئی ضروری ہدایات پر عمل کریں۔

جرمانے

مزید :

ملتان صفحہ آخر -