سینکڑوں ہاتھی کورونا وائرس کی وجہ سے بیروزگار ہوگئے

سینکڑوں ہاتھی کورونا وائرس کی وجہ سے بیروزگار ہوگئے
سینکڑوں ہاتھی کورونا وائرس کی وجہ سے بیروزگار ہوگئے

  

بنکاک(مانیٹرنگ ڈیسک) کورونا وائرس کی وجہ سے دنیا بھر میں کروڑوں لوگ بے روزگار ہو گئے ہیں اور آپ کو یہ سن کر حیرت ہو گی کہ اس موذی وباءکی وجہ سے تھائی لینڈ کے سینکڑوں ہاتھیوں کا بھی روزگار چھن گیا ہے اور ان کے مالکان نے انہیں نوکری سے نکال کر گھر واپس بھیج دیا ہے۔ اے بی سی نیوز کے مطابق تھائی لینڈ کے مختلف سیاحتی مقامات پر کمرشل ہاتھی کیمپ بنائے گئے تھے اور جنگلوں سے سینکڑوں ہاتھی لا کر وہاں رکھے گئے تھے۔ اب جبکہ سیاحوں کی تعداد نہ ہونے کے برابر رہ گئی ہے چنانچہ ان ہاتھیوں کی بھی ضرورت نہیں رہی۔

رپورٹ کے مطابق کیمپوں کے مالکان کے لیے ان بے روزگار ہاتھیوں کی خوراک کا بوجھ اٹھانا دوبھر ہو گیا ہے جس پر انہوں نے انہیں واپس جنگل میں چھوڑنے کا عمل شروع کر رکھا ہے۔ بنکاک کے مختلف کیمپوں سے اب تک 100سے زائد ہاتھی 150کلومیٹر دور جنگلی علاقے میں لیجا کر چھوڑے جا چکے ہیں،جہاں سے انہیں لایا گیا تھا۔ لندن کی تنظیم ’ورلڈ اینیمل پروٹیکشن‘ کا کہنا ہے کہ ”تھائی لینڈ میں 2ہزار سے زائد سدھائے ہوئے ہاتھی مختلف سیاحتی مقامات پر موجود ہیں۔ کورونا وائرس کی وجہ سے ان ہاتھیوں کو واپس جنگلوں میں چھوڑا جا رہا ہے۔ایک ہاتھی روزانہ 300کلوگرام گھاس اور سبزیاں وغیرہ کھاجاتا ہے لہٰذا مالکان کے لیے بے روزگار ہاتھیوں کو اتنی خوراک دینا ممکن نہیں رہا۔“ رپورٹ کے مطابق تنظیم نے ان ہاتھیوں کو بچانے کے لیے چندہ جمع کرنے کا کام شروع کر دیا ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -بین الاقوامی -