رائیونڈ تبلیغی اجتماع کے موقع پر د ہشتگردی کا خطر ہ ، سیکیورٹی ہائی الرٹ

رائیونڈ تبلیغی اجتماع کے موقع پر د ہشتگردی کا خطر ہ ، سیکیورٹی ہائی الرٹ

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لا ہور (زا ہد علی خا ن /شعیب بھٹی )دہشت گردوں کی لاہور موجودگی کی اطلاع کے بعد رائیونڈ تبلیغی اجتماع میں بھی د ہشت گردی کا خطر ہ بڑھ گیاہے ،جس پرپو لیس حکام نے د ہشت گردی کو نا کام بنا نے کے لئے سیکیورٹی کے انتہائی سخت ا قدا ما ت کر لئے ہیں ، پولیس افسران کو سختی سے احکامات جاری کئے گئے ہیں کہ کسی بھی شخص کوبغیر شنا خت تبلیغی اجتماع میں شر کت کی اجا زت نہ دی جائے ۔تفصیلات کے مطابق رائیونڈ میں تبلیغی اجتماع کے موقع پر پو لیس اور د یگر قانو ن نا فذ کر نے وا لے ادارو ں کے 6ہزا ر اہلکا ر اجتماع میں سیکور ٹی پر تعینا ت کر د ئیے گئے ہیں جبکہ اس ضمن میں ایلٹ فورس کے جو انو ں نے چا رو ں اطرا ف سے اجتما ع کو گھیرے میں لے ر کھا ہے ، ذرائع کے مطابق خفیہ ایجنسیوں نے بھی پو لیس اور قانو ن نا فذ کر نے وا لے د یگر ادارو ں کوالرٹ کردیا ہے جس میں شبہ ظا ہر کیا گیا ہے کہ اجتما ع کے آ خری روز مبینہ طو ر پر د ہشت گردی ہو سکتی ہے ،پولیس ذرا ئع کے مطا بق اس سلسلے میں آ ئی جی پنجاب پو لیس نے گز شتہ روز سی سی پی او لا ہور ڈی آ ئی جی لا ہوسے خصو صی میٹنگ کی جس میں اجتما ع کی حفا ظت کے لئے خصو صی ہدا ئت جا ر ی کی گئیں ،پو لیس کو چیکنگ کے لئے میٹل ڈیٹیکٹر اور وا ک تھرو ں گیٹ بھی د ئیے گئے ہیں اور ایسے آ لات بھی د ئے گئے ہیں جس سے کسی بھی بارودی مواد کا پتہ چلا نے میں مدد مل سکے گی جبکہ فورس کو کا ل ٹر یس کر نے وا لے آ لا ت بھی د یے جا رہے ہیں ذرا ئع نے یہ بھی بتا یا ہے کے ایک کنٹرو ل رو م بھی کا م کیا گیا ہے جس کا برائے را ست تعلق آ ئی جی پو لیس پنجا ب سے ہو گا ۔ پو لیس ذرائع کے مطا بق اس خد شے کے بعد حفا ظتی انتظا ما ت مز ید سخت کردئیے گئے ہیں ۔ تقر یب کے دوران 900سے زا ئد پو لیس اور خفیہ ادا ر ے کے اہلکار ساد ہ کپڑو ں میں ڈ یو ٹی پر مامور ہوں گے ،ذرا ئع نے مز ید بتا یا ہے کے وا ہگہ با رڈر پر بم د ھما کہ کے بعد پہلی با ر باورد ی اور سا د ہ کپڑوں میں ملبو س ا فسرا ن اور اہلکار اپنی وردیوں پر شناختی کا رڈ چپساں کریں گے ۔واضح رہے کہ گز شتہ رات سے رائیونڈ تبلیغی اجتماع کے ارد گرد د علاقو ں میں سر چ �آ پر یشن شروع کردیا گیا ہے جو کہ اجتما ع کے آخری روز تک جا ر ی ر ہے گا تاکہ کسی بھی ناخوشگوار واقع سے بچا جاسکے۔

مزید :

صفحہ اول -