علماء کونسل آئین کیمطابق غیر مسلموں کے حقوق کا ہر سطح پر تحفظ کرے گی،طاہر محمود اشرفی

علماء کونسل آئین کیمطابق غیر مسلموں کے حقوق کا ہر سطح پر تحفظ کرے گی،طاہر ...

  

لاہور( نمائندہ خصوصی)پاکستان علماء کونسل آئین پاکستان میں دیئے گئے غیر مسلموں کے حقوق کا ہر سطح پر تحفظ کرے گی۔ پاکستان علماء کونسل کے رہنماؤں اور کارکنوں نے ٹوبہ ٹیک سنگھ میں مسیحی بچی کی خود سوزی کی کوشش کو ناکام بنا کر اور اس کے معاملے کو حل کر کے پاکستان علماء کونسل کی بین المذاہب و بین المسالک ہم آہنگی کی کوششوں کو تقویت دی ہے ۔ یہ بات پاکستان علماء کونسل کے مرکزی چیئرمین حافظ محمد طاہر محمود اشرفی اور صاحبزادہ زاہد محمود قاسمی نے مسلم مسیحی قائدین کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کہی ۔ وفد کی قیادت مولانا سعد اللہ لدھیانوی ، مولانا انیس الرحمن بلوچ ، پادری عموائیل کھوکھر اور فادر نثار نے کی ۔ انہو ں نے کہا کہ پاکستان علماء کونسل سے متصل قومی مصالحتی کونسل نے مختلف مذاہب اور مسالک کے درمیان پیدا ہونے والے مسائل کو ہمیشہ مفاہمت کے ذریعے حل کرنے کی کوشش کی ہے اور گذشتہ ایک سال کے دوران چوبیس سے زائد مقامات پر مذاکرات کے ذریعے مختلف مسائل کو حل کیا گیاہے ۔

انہوں نے کہا کہ اسلام امن اور سلامتی کا دین ہے اور رسول اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کی تعلیمات غیر مسلموں کے تحفظ اور حقوق کے معاملے میں روز روشن کی طرح واضح ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کسی کو یہ اختیار نہیں دیا جا سکتا کہ وہ سرکاری یا غیر سرکاری سطح پر غیر مسلموں کے حقوق کو غصب کرنے کی کوشش کرے۔انہوں نے کہا کہ ایک اقلیتی گروہ کی طرف سے حضرت عیسیٰ علیہ السلام کی توہین پر مشتمل لٹریچر کی اشاعت نہ قابل قبول ہے اور حکومت پاکستان اور حکومت پنجاب کو اس پر فوری نوٹس لینا چاہیے ۔ مسیحی رہنما پادری عموائیل کھوکھر نے کہا کہ پاکستان علماء کونسل کی غیر مسلموں کے تحفظ اور حقوق کے لیے کوششیں قابل قدر ہیں اور رمشاء مسیح کیس کے بعد نبیلہ کوثر کے معاملے کو خوش اسلوبی سے حل کرنا پاکستان علماء کونسل سے متصل قومی مصالحتی کونسل کی بڑی کامیابی ہے ۔ یاد رہے کہ گذشتہ ہفتے ایک مسیحی بچی نبیلہ کوثر نے ٹوبہ ٹیک سنگھ میں خود سوزی کی کوشش کی تھی بعض وجوہات کی بنیاد پر جس پر پاکستان علماء کونسل سے متصل قومی مصالحتی کونسل کے ذریعے معاملات کو خوش اسلوبی سے حل کر لیا گیا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -