تربیت حاصل کرنیوالے عوام کی بہتر خدمت کیلئے کمر کس لیں ،ناسر درانی

تربیت حاصل کرنیوالے عوام کی بہتر خدمت کیلئے کمر کس لیں ،ناسر درانی

  

پشاور(پاکستان نیوز) انسپکٹر جنرل آف پولیس خیبر پختونخوا ناصر خان دُرانی نے تربیت مکمل کرنے والے جو نیئر کمانڈکورس کے آفسروں پر زور دیا ہے کہ وہ تربیت کے دوران حاصل کردہ علم اور تجربے کو عملی میدان میں بروئے کار لاکر لوگوں کے لیے آسانیاں پیدا کریں۔ یہ بات انہوں نے آج سنٹرل پولیس آفس پشاور میں صوبے کی تاریخ میں پہلی بار تین مہینے کی جونیئر کمانڈ کورس مکمل کرنے والے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ایڈیشنل آئی جی پی ھیڈکوارٹرز میاں محمد آصف ،ڈی آئی جی سی ٹی ڈی صلاح الدین محسود ،ڈی آئی جی ٹریننگ ڈاکٹر مسعود اسلم، ڈی آئی جی ھیڈکوارٹرز محمد عالم شنواری، اے آئی جی اسٹبلشمنٹ آصف اقبال مومنداورپرسنل سٹا ف آفیسر برائے آئی جی پی محمد افضل بھی اس موقع پر بھی موجود تھے۔ واضح رہے کہ جونیئر کمانڈکورس پولیس فورس میں ڈی ایس پی رینک سے ایس پی رینک میں ترقی پانے کے لیے متعارف کرایا گیا ہے۔پولیس سربراہ نے کہا کہ کامیابی سے تربیت مکمل کرنے والوں کا اصل امتحان اب شروع ہو رہاہے اور ان پر زور دیا کہ وہ فیلڈ میں جا کر حاصل کردہ علوم کو عوام کی بہتر خدمت کے لئے بھر پور طریقے سے استعمال میں لائیں۔ آئی جی پی نے کہا کہ علم پر اس کی اصل روح کے مطابق عمل کرکے عزت حاصل کیا جا سکتاہے اور شرکاء پر زور دیا کہ وہ ایسی قباحتوں اور چیزوں سے دور رہیں جو ان کی اخلاقی قدروں اور مقدس پیشے پر سوالیہ نشان بنتی ہو اور تشخیصی نقطہ نظر اپناکر باقاعدہ منصوبہ بندی اور حکمت عملی کے ساتھ مثبت رویہ اپناکر جرائم کے سدباب کو یقینی بنائیں۔ شرکاء کو مزید ہدایت کی گئی کہ وہ قدم قدم پر لوگوں کے لئے آسانیاں پیدا کریں جس سے اُن کو مقررہ پیشہ ورانہ اہداف کے حصول میں خود بخود آسانی پیدا ہوجائے گی۔ اُنہیں یہ بھی ہدایت کی گئی کہ کورس کے دوران سیکھنے والے چیزوں کو فیلڈ میں جاکر فورس کی بہتری کے لئے اپنے ماتحتوں کو سیکھائیں۔اور اُمید ظاہر کی کہ کورس کے دوران حاصل کردہ تربیت اُن کے پیشہ ورانہ کیئریر پر بہتر اور معیاری اثرات مرتب کرے گی۔قبل ازیں شرکاء نے فرداََ فرداََ کورس کے دوران حاصل کردہ تربیت ، تجربے اور علوم کے بارے میں اپنا اپنا نقطہ نظر بیان کیا اور کورس کو اپنے پروفیشنل کئیرئر کے لئے رگوں میں دوڑنے والے خون کے مترادف قرار دیا۔ واضح رہے کہ تین مہینے پر مشتمل جونیئر کمانڈ کورس میں شرکاء کو جدید پولیسنگ سکلز، لیڈر شپ کوالٹی ماڈیولز، منیجمنٹ مہارت، فیصلہ سازی سکلز، سٹریس منیجمنٹ سکلز، تشخیص نقطہ نظر، مسائل حل کرنے کے نقطہ نظر کمپیوٹر جانکھاری اور میڈیا منیجمنٹ سے متعلق تربیت دی گئی۔ تین مہینے کی جونئیر کمانڈ کورس کامیابی سے مکمل کرنے والوں میں میاں نصیب جان،قمر زمان، شمس الرحمن، محمد آیاز، عبدالعزیز آفریدی، ساجد خان، گل زرین، افتخار احمد، ثناء اللہ، اظہار احمد، افتخار الدین، ریاض احمد، عبدالحئی، ذوالفقار احمد تنولی، احسان اللہ، جاوید اقبال، عزیز الرحمن اور امتیاز گل شامل تھے۔

مزید :

پشاورصفحہ اول -