شیرگڑھ میں بھتیجے کے ہاتھوں قتل ہونے والے سپرد خاک

شیرگڑھ میں بھتیجے کے ہاتھوں قتل ہونے والے سپرد خاک

  

شیر گڑھ(نامہ نگار)ہاتھیان میں بھتیجے کے ہاتھوں قتل ہونے والے چچا،چچا زاد بھائی ،چچی اور پانچ سالہ بچی سپرد خاک کئے گئے جنازے کے وقت رقت امیز مناظر دیکھنے میں آئے ایک ہی وقت میں ایک ہی گھر سے چار جنازے اٹھنے پر لوگ دھاڑیں مار مار کر رونے لگے جبکہ ہاتھیان کا پورا ماحول سوگوار رہا اور ہر آنکھ اشکبار تھا لوند خوڑ پولیس نے مقتول حاجی شتاب کے بیٹے ایمل خٹک کے رپورٹ پر ملزم کے خلاف زیر دفعات جرم 302/324/449 کے تحت مقدمہ درج کیا انہوں نے اپنے رپورٹ میں لوند خوڑ پولیس کو بتا یا کہ میرے چچا زاد بھائی تاجیم ولد محمد بشیر عرف مرزا ساکن ہاتھیان حال ہریچندہم سے پیسوں کا مطالبہ کر رہے تھے جمعرات کے شام وہ ہمارے گھر واقع ہاتھیان باغ محلہ آئے اور ہم سے پیسوں کا مطالبہ کیا انکار پر اس نے آتشین اسلحہ سے فائرنگ شروع کی جس کی زد میں آکر میرے والد حاجی شتاب ،والدہ مسمات گل نظیرہ،چچا زاد بھائی خالد ولد مظفر اور پانچ سالہ بھتیجی سائرہ دختر عمر خطاب جان بحق ہو گئے انہوں نے کہا کہ وہ منشیات کا عادی تھا اور نشے کے لئے پیسوں کا مطالبہ کر رہا تھا لوند خوڑ پولیس نے مقدمہ درج کرکے ملزم کی گرفتاری کے لئے چھاپے مارنا شروع کئے ملزم کے بارے میں معلوم ہوا ہے کہ وہ عادی مجرم تھا اور کچھ عرصہ پہلے بھی اس نے ہاتھیان میں دو افراد پر فائرنگ کیا تھا جس میں ایک جان بحق ہوا تھا جبکہ ایک زخمی ہوا تھا

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -