ایاز صادق نے اپنے لیڈر کیلئے سپیکر قومی اسمبلی کی کرسی کے تقاضوں کو پس پشت ڈال دیا،علیم خان

ایاز صادق نے اپنے لیڈر کیلئے سپیکر قومی اسمبلی کی کرسی کے تقاضوں کو پس پشت ...

لاہور (نمائندہ خصوصی)تحریک انصاف سنٹرل پنجا ب کے صدر عبدالعلیم خان نے کہا ہے کہ سردار ایاز صادق نے اپنے بادشاہ سلامت کو خوش رکھنے کیلئے سپیکر قومی اسمبلی کی کرسی کے تقاضوں کو پس پشت ڈال دیا ہے اور بالخصوص گذشتہ ضمنی انتخاب میں پی ٹی آئی کو ملنے والی عوامی حمایت سے خوفزدہ ہو کر یکطرفہ سیاسی مہم جوئی شروع کر دی ہے وزیر اعظم کے خلاف عمران خان کے ریفرنس کو ردی کی ٹوکری میں پھینک کر عمران خان کے خلاف ریفرنس کو الیکشن کمیشن میں بھیجنا ایاز صادق کی طرف داری کا واضح ثبوت ہے چیف جسٹس آف پاکستان اور چیف الیکشن کمشنر قومی اسمبلی کے سپیکر کی جانبداری کا نوٹس لیتے ہوئے انہیں فوری طور پر نا اہل قرار دیں عبدالعلیم خان نے کہا کہ بطور ممبر قومی اسمبلی بھی ایاز صادق نا اہل پائے گئے ہیں اُن کے حلقے کے عوام سخت نالاں ہیں جنہیں گذشتہ15برسوں میں کوئی نیا سکول ،ہسپتال یا تعلیمی ادارہ نہیں ملا حتیٰ کہ عوام پینے کے صاف پانی کو بھی تر س رہے ہیں عبدالعلیم خان نے این اے122کے مختلف علاقوں میں واٹر فلٹریشن پلانٹس کے افتتاح کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ غریب عوام کا کوئی پر سان حال نہیں لوگ دھڑا دھڑ بیماریوں میں مبتلا ہو رہے ہیں جب کہ ارباب اختیار کو صرف بادشاہ سلامت کی خوشنودی کی فکر ہے انہوں نے کہا کہ اگر نواز لیگ نے لوگوں کی مشکلات کا خیال رکھا ہوتا تو 11اکتوبر 2015کے ضمنی الیکشن میں پی پی147کی نشست سے نورا لیگ کو ایسی عبرت ناک شکست نہ ہوتی اور نہ ہی انہیں این اے122میں ایسی شرمناک دھاندلی نہ کرنی پڑتی۔اس موقع پر ایم پی اے شعیب صدیقی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آئندہ الیکشن میں لاہور شہر میاں برادران کا رہا سہا ساتھ بھی چھوڑ دے گا اور عوام بھی انہیں دوبارہ دھاندلی کا موقع نہیں دیں گے انہوں نے کہا کہ این اے122اور پی پی147کی مختلف یونین کونسلوں میں عبدالعلیم خان فاؤنڈیشن کی طرف سے عوام کیلئے بلا تفریق پینے کے صاف پانی کی فراہمی اور ڈسپنسریوں کا قیام حکومت وقت کے منہ پر طمانچہ ہے جو اربوں روپے کا بجٹ اللوں تللوں میں ضائع کر رہے ہیں اس موقع پر استاد رشید ،راجہ شہزاد، راجہ امین ،آبی گجر، حافظ عامر مغل اور محمد علی بھی موجود تھے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...