فوج، فوجی اور شہادت

فوج، فوجی اور شہادت

مکرمی! فوج ہر ملک میں خارجی اور داخلی سلامتی کے لئے ہوتی ہے۔ پاکستانی فوجی افسر اور جوان 1971- 1965ء اور ضرب عضب کی جنگوں میں شہید ہوئے اور اب مودی کی پاگل پن والی حرکتوں سے لائن آف کنٹرول پر بھی شہید ہو رہے ہیں۔ جبکہ راستے بند ہونے کی وجہ سے اب پاکستانی فوجی افسر سڑکوں سے کھائی میں گر کر شہید ہو رہے ہیں۔ اس میں شہید کرنل کا کیا قصورتھا کہ وہ حکم کی تعمیل میں راستہ بند ہونے کی وجہ سے متبادل راستہ ڈھونڈھتے ہوئے کھائی میں گر کر شہید ہو گیا۔ کیا فوجی اب اپنے ہی لیڈروں کے غلط کاموں کی وجہ سے مرنا شروع ہو جائیں؟ کیا حکم دینے والے سیاسی لیڈروں اور حکم کی تعمیل کروانے والے سول افسران پر قتل کا مقدمہ دائر نہیں ہونا چاہئے؟ یہ بھی ضروری ہے کہ پریذیڈنٹ آف پاکستان کو کسی مجرم کی سزا میں تخفیف یا مکمل طور پر ختم کرنے کے اختیار کو ختم کر دینا چاہئے۔ جیسے زرداری صاحب نے اپنے وزیر داخلہ کو معاف کر دیا تھا۔ اب ان دونوں کو اللہ تعالیٰ کی عدالت میں پیش ہونے کا انتظار کرنا چاہئے کیونکہ معافی دینا صرف اللہ تعالیٰ کا حق ہے۔ (بریگیڈیئر (ر) ریاض حیدرستارہ امتیاز ملٹری، لاہور)

مزید : اداریہ


loading...