ڈولفن فورس اہلکاروں کی غنڈہ گردی ، موٹرسائیکل سوار پر سرعام تشدد ، میڈیا ٹیم پہنچنے پر متاثرہ شہری کو لے کر فرار

ڈولفن فورس اہلکاروں کی غنڈہ گردی ، موٹرسائیکل سوار پر سرعام تشدد ، میڈیا ٹیم ...
 ڈولفن فورس اہلکاروں کی غنڈہ گردی ، موٹرسائیکل سوار پر سرعام تشدد ، میڈیا ٹیم پہنچنے پر متاثرہ شہری کو لے کر فرار

  


لاہور(وقائع نگار) تھانہ کلچر میں تبدیلی کے لئے تشکیل کی گئی ڈولفن فورس خود شہریوں پر تشدد کرنے لگی۔ ڈولفن فورس کے اہلکاروں کی غنڈہ گردی ،موٹر سائیکل سوار شہریوں کے نہ رکنے پر ان کو پکڑ کر سر عام تشدد کا نشانہ بنا ڈالا ،میڈیا ٹیم کے موقع پر پہنچنے پر متاثرہ شہری کو ساتھ لیکر فرار ہو گئے ۔تفصیلات کے مطابق پولیس حکام نے شہر میں جرائم ہونے کی صورت میں فوری کارروائی اور ملزمان کا تعاقب کر کے ان کو پکڑنے کے لئے ڈولفن فورس کو تشکیل دیا لیکن تھانوں میں رہ کر چند ماہ کے اندر ہی ڈولفن فورس کے اہلکاروں کی حرکات تھانہ کے اہلکاروں جیسی ہو گئی ہیں ۔راہ جاتے شہریوں کو روک کر ان سے" جگا" وصول کرنے کی لت ڈولفن فورس میں بھی پیدا ہو گئی ہے جبکہ شہریوں کے نہ رکنے یا بحث کرنے پر ان پر تشدد بھی کیا جاتا ہے ۔ایسا ہی واقعہ گزشتہ روز کلمہ چوک میں پیش آیا جہاں دو ڈولفن فورس اہلکار ناکہ لگائے کھڑے تھے ۔اس دوران شہری فرمان اپنے والد کے ساتھ وہاں سے موٹر سائیکل پر گزرا ۔

عینی شاہدین کے مطابق ڈولفن فورس کے اہلکاروں نے اس کو رکنے کا اشارہ کیا لیکن اس نے انہیں نہیں دیکھا اور آگے نکل گیا جس پر ڈولفن فورس کے اہلکاروں نے اس کا پیچھا کیا اور کلمہ چوک ڈائیوو اڈہ کے سامنے اس کو روک کر بغیر بات کئے اس پر تشدد شروع کر دیا ۔ڈولفن فورس کے اہلکاروں کے تشدد کی وجہ سے شہری فرمان کی شرٹ پھٹ گئی اور لوگوں کی بڑی تعداد موقع پر جمع ہو گئی ۔

اتنے میں روزنامہ’’ پاکستان ‘‘کی ٹیم بھی موقع پر پہنچ گئی جس پر ڈولفن فورس کے اہلکارپریشان ہو گئے اور انہوں نے میڈیا ٹیم سے کیمرا چھیننے کی کوشش کی لیکن شہریوں کے مزاحمت کرنے پر ڈولفن فورس کے اہلکار فرمان کو لیکر موقع سے فرار ہو گئے ۔شہریوں کا اس موقع پر کہنا تھا کہ کلمہ چوک پر ڈولفن فورس کے اہلکار روزانہ کی بنیاد پر ناکہ لگا کر کھڑے ہو جاتے ہیں اور لوگوں سے" جگا" وصول کرتے ہیں ۔پولیس حکام سے اپیل ہے کہ اس حوالے سے کارروائی کی جائے اور اس "نئے عذاب " سے شہریوں کی جان چھڑوائی جائے ۔

مزید : علاقائی


loading...