ہائی کورٹ نے وزیراعلیٰ کی نااہلی کی درخواست ناقابل سماعت قرار دے کر مسترد کردی

ہائی کورٹ نے وزیراعلیٰ کی نااہلی کی درخواست ناقابل سماعت قرار دے کر مسترد ...
ہائی کورٹ نے وزیراعلیٰ کی نااہلی کی درخواست ناقابل سماعت قرار دے کر مسترد کردی

  


لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے قرار دیا ہے کہ پارلیمنٹیرینز کے خلاف محض الزامات کی بنیاد پر کارروائی نہیں کی جا سکتی، رکن اسمبلی کے خلاف کارروائی کا فورم پارلیمنٹ ہے.

چیف جسٹس سید منصور علی شاہ نے یہ ریمارکس وزیر اعلی شہباز شریف کی نااہلی کے لئے دائر ایک شہری اظہر عباس کی درخواست ناقابل سماعت قرار دے کر مسترد کرتے ہوئے دیئے ۔فاضل جج نے بطور اعتراض کیس اس درخواست کی سماعت کی ، درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ وزیر اعلی شہباز شریف صوبے میں امن و امان قائم کرنے میں ناکام ہو چکے ہیں، بدامنی پیدا کرنے پر شہباز شریف غداری کے مرتکب ہوئے ہیں، آئی جی مشتاق سکھیرا بھی بدامنی پیدا کرنے میں ملوث ہیں. انہوں نے استدعا کی کہ شہباز شریف اور مشتاق سکھیرا کے خلاف آرٹیکل 6 کے تحت کارروائی کی جائے اوروزیراعلیٰ کو نااہل قرار دیا جائے ۔

چیف جسٹس نے دوران سماعت ریمارکس دیئے کہ محض الزامات پر کسی ممبر پارلیمنٹ کے خلاف کارروائی نہیں کر سکتے، عدالت کا کام حکومت چلانا نہیں ہے بلکہ آئین اور قانون کے مطابق فیصلے کرنا ہے، عدالت نے مزید ریمارکس دیئے کہ رکن اسمبلی کے خلاف کارروائی کا فورم عدالت نے بلکہ پارلیمنٹ ہے، درخواست گزار کو اسمبلی سے رجوع کرنا چاہیے، عدالت نے درخواست پر ناقابل سماعت ہونے کا اعتراض برقرار رکھتے ہوئے اسے خارج کر دیاہے۔

مزید : لاہور


loading...