ڈاﺅ یونیورسٹی میں فزیکل میڈیسن اینڈ ری ہیبلیٹیشن کا انعقاد

ڈاﺅ یونیورسٹی میں فزیکل میڈیسن اینڈ ری ہیبلیٹیشن کا انعقاد

  



کراچی (اسٹاف رپورٹر)ماہرین نے کہا ہے کہ پارکنسن کی بیماری عام طورپر بڑی عمر کے لوگوں میں ہوتی ہے، بعض صورتوں میں یہ کم عمری میں بھی ہوجاتی ہے، پارکنسن کی بیماری دماغ کے اس حصے میں اعصابی خلیو ں کے کھونے کی وجہ سے ہوتی ہے، جسے سبسٹینیانگرا کہتے ہیں، عام طور پر فزیکل ریہیبلیٹیشن میں بہت زیادہ مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے ، اس کی عمومی وجہ ناواقفیت ہوتی ہے، اسکے لیے معلومات بڑھانے کی ضرورت ہے، یہ باتیں ان ماہرین نے ڈاﺅ یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز کے ادارے انسٹیٹیوٹ آف فزیکل میڈیسن اینڈ ری ہیبلیٹیشن کے دوسرے روز آگہی ورکشاپ سے خطاب کرتے ہوئے کہی، اس موقع پر انسٹیٹیو ٹ آف فزیکل میڈیسن اینڈ ریہلبیٹیشن کی ڈائریکٹر پروفیسر نبیلہ سومرو اور دیگر اساتذہ اور طلبہ کی بڑی تعداد بھی موجود تھی، تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ڈائریکٹر آف ریہیبلیٹیشن ، کنسلٹنٹ فزیکل میڈیسن اینڈریہیبلیٹیشن ، رائل میلبرن اسپتال میلبرن ، ڈاکٹر فرسین خان نے کہا کہ اسٹروک پر مزید سرچ کرنے کی ضرورت ہے، اس کے لیے ہم کسی کے ساتھ زبردستی نہیں کر سکتے ِ بلکہ طلبہ کو خود آگے آنا ہوگا، انہو ں نے بتایا کہ میلبرن میں وہ 17کنسلٹنٹ کے ساتھ کام کر رہی ہیں، جبکہ شروع میں انکی تعداد 04تھی، اس پر بیرونِ ملک ریسرچ کے شعبے میں ان کا شوق ظاہر ہوتا ہے، اس مقصد کے لیے ہمیں ایک ٹیم کے طور پر کام کرنا ہوگا، بحیثیت انفرادی کوشش کے ٹیم ورک سے زیادہ کامیابیاں حاصل ہوتی ہیں، اس پر کام کرنے کے لیے باقاعدہ انفراسٹریچر کا ہونا ضروری ہے، انہو ںنے بتایا کہ اسٹروک کی صورت میں آسڑیلیا اور امریکہ میں ایمبولینس سے ہی کام شروع ہوجاتا ہے، اور مطلوبہ اسپتال میں مریض کی حالت کے بارے میں معلومات دے دی جاتی ہیں اور مطلوبہ ڈاکٹر فوری طور پر وقت پر موجود ہوتا ہے، اسپتال پہنچتے ہی اس کا علاج شروع کردیا جاتا ہے، اس استپال میں بھی بہترین اوٹی کمپلیکس اسٹنڈرڈ کے مطابق موجود ہے، سسٹم اور ٹیم ورک، اپ گریڈیشن اور تربیت کی ضرورت ہے۔ انہو ں نے بتایا کہ 2017میں بیرون ملک 700اسٹروک کے مریض رپورٹ ہوئے، اسٹروک کی صورت میں 35سے 40منٹ اہم ہوتے ہیں،جبکہ thermabectomy bypass کے لیے 90سے 120منٹ اہم ہوتے ہیں، بیرونِ ملک ہر اسپتال میں اسٹروک یونٹ کام کرتا ہے، انہوںنے بتایا کہ عام طور پر واک کا مشورہ اسی لیے دیا جاتا ہے کہ اسٹروک سے سب سے پہلے ہاتھ اور پاﺅں متاثر ہوتے ہیں ، انہوںنے ایسے مریضوں کے لیے کمپوٹر کے مختلف کھیلوں کے متعلق بھی بتایا کہ ایسے مریضوں کو مختلف ورزش کے طریقے اور ڈیوائسز کا استعمال سکھایا جا سکے اور ان کا انٹرسٹ بھی قائم رہ سکے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر