بھارت نے سکھ برادری کے جذ بات کو مجروح کیا :ترجمان دفتر خارجہ

بھارت نے سکھ برادری کے جذ بات کو مجروح کیا :ترجمان دفتر خارجہ
بھارت نے سکھ برادری کے جذ بات کو مجروح کیا :ترجمان دفتر خارجہ

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) ترجمان دفتر خارجہ نے کہاہے کہ مراعات مسترد کرکے سکھ برادری کے جذبات کومجروح کیا ،بھارت کرتار پور راہداری کے حوالے سے ذہنی الجھاؤ کا شکار ہے ۔

تفصیلات کے مطابق ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر فیصل نے کہا کہ بھارت نے سکھ برادری کے جذبات کو مجروح کیاہے,اگر بھارت مراعات سے فائدہ نہیں اٹھانا چاہتا تو اس کی مرضی ، بھارت کرتار پورراہداری کے حوالے سے ذہنی الجھاؤ کا شکار ہے ۔ انہوں نے کہا کہ بابا گرونانک کے 550 ویں یوم پیدائش پر پاکستان نے خیر سگالی کے جذبے کے تحت یاتریوں کے لئے خصوصی سہولیات کا اعلان کیا تھاجنہیں بھارت نے سکھ برادری کے جذبات سے قطعی لاتعلقی اختیار کرتے ہوئے نامنظور کر دیا ہے، اگر بھارت ان سہولیات کو قبول کرنے سے انکاری ہے تو یہ اس کی مرضی ہے،بھارت کنفیوژن پیدا کرکے دنیا کو کنفیوز کر رہا ہے۔

واضح رہے کہ وزیر اعظم عمران خان نے سکھوں کے روحانی پیشوا بابا گرونانک کی 550ویں برسی کے موقع پر سکھ زائرین کی سہولت کیلئے ایک سال تک پاسپورٹ کی پابندی ختم کرنے کا اعلان کیا تھا ۔ زائرین انٹر ی پرمنٹ شناختی کارڈ اور ڈرائیونگ لائسنس دکھا کر حاصل کرسکتے ہیں جبکہ وزیر اعظم نے دس دن پہلے فہرستوں کی تبادلے کی پابندی بھی ختم کرنے کا اعلان کیا تھا لیکن بھارت کے جانب سے سکھوں کیلئے تمام مراعات کومسترد کردیا گیا ۔

مزید : قومی /اہم خبریں


loading...