اوگرا‘آئل کمپنیوں کے اربوں روپے فراڈ کیس کی سماعت 12نومبر تک ملتوی

 اوگرا‘آئل کمپنیوں کے اربوں روپے فراڈ کیس کی سماعت 12نومبر تک ملتوی

  

 لاہور(نامہ نگار)سپیشل جج سینٹرل اعجاز حسن اعوان نے اوگرا اور آئل کمپنیوں کے اربوں روپے کے فراڈ کے کیس کی سماعت 12نومبر تک ملتوی کرتے ہوئے ایف آئی اے کے تفتیشی افسر سے رپورٹ طلب کر لی عدالت میں سابق ڈی جی اوگرا ڈاکٹر شفیع الرحمان آفریدی اور ندیم بٹ کی بعد از گرفتاری درخواست ضمانت پر سماعت ہوئی،سابق ڈی جی اوگرا ڈاکٹر شفیع الرحمان آفریدی کی جانب سے صدر لاہور بار ملک سرود ایڈووکیٹ پیش ہوئے،درخواست گزاروں کا موقف ہے کہ ایف آئی اے نے اوگرا اور ائل کمپنیوں کے گرفتار افسران کیخلاف بے بنیاد مقدمات درج کئے،ملزموں کے خلاف تحقیقات مکمل اور جوڈیشل ریمانڈ پر جیل منتقل کیا جا چکا، عدالت سے استدعاہے کہ ان کوضمانت پر رہا کرنے کا حکم دیا جائے ایف آئی اے کے پراسیکیوٹر نے عدالت کو بتایا کہ ملزمان اربوں روپے کے فراڈ میں ملوث ہیں،نجی ائل کمپنیوں نے اوگرا کی ملی بھگت سے آئل کی غیر قانونی امپورٹ اور ذخیرہ اندوزی کی، اب تک کی تحقیقات میں پانچ سے سات ارب روپے کا فراڈ کیا گیا، فراڈ سے کمائی ہوئی رقم کو منی لانڈرنگ کیلئے استعمال کیا گیا، پیٹرولیم کمیشن کی رپورٹ پر ملزمان کیخلاف ایف آئی اے نے مقدمات درج کئے۔

فراڈ کیس

مزید :

صفحہ آخر -