بیوی مرنے کے 7سال بعد اس کی جگہ خاوند کو نوکری دینے کا حکم

  بیوی مرنے کے 7سال بعد اس کی جگہ خاوند کو نوکری دینے کا حکم

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائی کورٹ کے مسٹرجسٹس محمدشان گل نے بیوی کے مرنے کے سات سال بعد اس کی جگہ خاوند کو نوکری دینے کا حکم دے دیا، فاضل جج نے ریمارکس دیئے کہ اکیسویں صدی میں مرد اور عورت کو یکساں حقوق حاصل ہیں عدالت نے خاوند کو نوکری دینے کیلئے قوانین میں تبدیلی کی ہدایت بھی کی  عدالت نے محمد صدیق کی درخواست پر 33 صفحات پر مشتمل فیصلہ جاری کردیا عدالتی فیصلے میں قرا ر دیا گیاہے کہ خاوند کے مرنے کے بعد بیوی کو نوکری ملتی ہے مگر بیوی کے بعد خاوند کو نہیں، پنجاب حکومت کا کہنا ہے کہ قانون صرف بیوہ کو خاوند کی جگہ نوکری دینے کی اجازت دیتا ہے کیونکہ اس سے بیوہ کو معاشی تحفظ دیا گیا، عدالت نے قرار دیا کہ پنجاب حکومت کا جواب مضحکہ خیز ہے،اسی ملک میں بینظیر بھٹو وزیر اعظم رہ چکی ہیں،ملالہ یوسفزئی بھی پاکستانی ہے،اکیسویں صدی میں عورت اور مرد کو یکساں حقوق حاصل ہیں، عورت کے مرنے پر مرد کو نوکری نہ دینا خود عورت کے ساتھ امتیازی سلوک ہے، آج عورت کی تعلیم کی شرح مردوں سے زیادہ ہے،محمد صدیق کو اسی مرحومہ بیوی کی جگہ جونئیر کلرک تعینات کیاجائے۔

نوکری دینے کاحکم 

مزید :

صفحہ آخر -