کررونا ویکسی نیشن ورنہ سکولوں مدارس میں طالب علموں کا داخلہ بند 

کررونا ویکسی نیشن ورنہ سکولوں مدارس میں طالب علموں کا داخلہ بند 

  

ملتان،  میلسی (وقائع نگار،نامہ نگار)  نشتر ہسپتال کے آئی سو لیشن وارڈز میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران کورونا میں مبتلا کوئی مریض جاں بحق نہیں ہوا،یوں یکم اپریل 2020  سے 7 نومبر  2021 کے درمیان کورونا کے باعث ہونے والی اموات کی مجموعی تعداد 928   ہے،جبکہ نشتر ہسپتال میں زیر علاج کورونا کہ مریضوں کی تعداد 03 ہو گئی ہے,جبکہ کورونا کے شبہ میں 28 مریض زیر علاج ہیں جن کی رپورٹس(بقیہ نمبر16صفحہ6پر)

 کا انتظار  ہے،ادھر رواں سال نشتر ہسپتال میں کورونا کے شبہ میں 8ہزار 320 افراد رپورٹ ہوئے جن میں سے 2 ہزار 935 افراد میں کورونا کی تصدیق ہوئی ہے،ادھر کورونا مریضوں کے لئے  مختص  52 وینٹی لیٹرز میں سے 40 وینٹی لیٹر خالی ہیں،   جبکہ کورونا آئی سو لیشن بلاک میں بستروں کی تعداد 156 کر دی گئی  ہے، جن میں سے  92 خالی ہیں،ادھر ترجمان نشتر ہسپتال ڈاکٹر عرفان کے مطابق کورونا آئی سو لیشن وارڈ میں داخل 64مریضوں میں سے 55 نے موذی وائرس کے خلاف ویکسین نہیں کروا رکھی ہے جبکہ زیر علاج کورونا میں مبتلا 03 مریضوں نے بھی کورونا ویکسین نہیں لگوا رکھی ہے ذرائع کے مطابق تحصیل میلسی کے سکولوں میں 17 سال سے 12 سال تک کے طلبہ و طالبات کی 60 سے 70 فیصد تعداد کی ویکسینیشن ہو گئی ہے۔مختلف ماہرین تعلیم۔کے مطابق این سی اوسی کی ہدایت پر والدین سے قبل ازیں رضامندی فارم پر دستخظ حاصل کیے گئے جس میں این سی او سی کو جاری وفاقی وزارت تعلیم کے حکم سے آگاہ کیا گیا کہ نار ضامندی  کی صورت میں ویکسینیشن نہ کرانے کی وجہ پو چھی گئی اور وفاقی وزارت کی جانب سے یہ بتایا گیا کہ 17 سے 12 سال کی عمر کے بچوں کے لیے ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن نے فا ئزر ویکسین تجویز کی گئی ہے جو 17 سال سے کم عمر کے اسکول یامدارس کے  لیے محفوظ ترین ہے اس سلسلسے میں اس ویکسین کا استعمال 12 ممالک بشمول امریکہ انڈو نیشیا۔سعودی عرب میں استعمال کا بتایا گیا۔یہ بھی واضح کیا گیا کہ ویکسین کی دوسری  ڈوزلگوانے کی آخری تاریخ 30 نومبر ہے وفاقی وزارت  کے مطابق مدارس اور سکولوں میں جس کے گذ رنے کے بعد مدارس یا سکولوں میں نان ویکسینیٹڈ بچے داخل نہیں ہو سکیں گے اس بارے این سی اوسی کے احکام سے چیف ایگزیکٹو آفیسر ایجوکیشن صہیب عمران کے جاری کردہ نو ٹیفیکیشن سے آگاہی ملی جس میں بتایا گیا کہ کورونا کے حملے سے محفوظ رکھنے کے لیے طلبہ و طالبات کو یہ ویکسینیشن کی جارہی ہے۔ ٹیچنگ ہسپتال ڈی جی خان کے کرونا وارڈ میں داخل دو اور مریض جاں بحق ہوگئے ٹیچنگ ہسپتال ڈی جی خان کے فوکل پرسن ڈاکٹر خالد تحسین نے بتایا کہ ٹیچنگ ہسپتال میں 2 مریضوں کی حالت انتہائی خطرناک ہے ٹیچنگ ہسپتال کے کرونا وارڈ میں داخل دو مریض احمد بخش اور محمد اقبال جاں بحق ہو گئے،جبکہ کرونا وارڈ میں داخل کل 10 مریضوں میں سے5مریضوں کے ٹیسٹ مثبت، 2 نیگیٹو،3 میں کرونا کاخدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے اس کے علاوہ ہسپتال میں گزشتہ روز 201 مریضوں کے کرونا سیمپل لئے گئے جس میں ایک مریض کا رزلٹ مثبت اور 200 مریضوں کے رزلٹ نیگیٹو آئے فوکل پرسن ڈاکٹر خالد تحسین نے کہا کہ کرونا ایک خطرناک وباء ہے حکومتی ایس او پیز پرعمل کرکے اس سے محفوظ رہاجاسکتا ہے شہری حکومتی ایس اوپیز پر عملدرآمد کویقینی بنائیں خود بھی محفوظ رہیں اور دوسروں کوبھی محفوظ رکھیں۔

کرونا

مزید :

ملتان صفحہ آخر -