مزدوروں کو ماہانہ مقررہ اجرت کی عدم ادائیگی بارے سیمینار 

مزدوروں کو ماہانہ مقررہ اجرت کی عدم ادائیگی بارے سیمینار 

  

پشاور(سٹی رپورٹر) پاکستان ورکرز فیڈریشن کے زیر اہتمام حکومت کی جانب سے مزدوروں کو ماہانہ مقررہ اجرت کی عدم ادائیگی اور ان کے دیگر مسائل سے متعلق پشاور میں ورکشاپ کا انعقاد کیا گیا ورکشاپ میں عوامی نیشنل پارٹی کے پارلیمانی لیڈر سردار حسین بابک، اراکین خیبر پختونخوا اسمبلی ثمر ہارون بلور، میر کلام وزیر، پاکستان ورکرز فیڈریشن کے صوبائی جنرل سیکرٹری رازم خان، صدر شاد خان، نیشنل کوآرڈینیٹر شوکت علی انجم، ضلعی صدر عبدالسعید اور دیگر رہنماؤں نے شرکت کی پی ڈبلیو ایف کے نمائندوں نے اراکین اسمبلی کو صوبائی حکومت کی جانب سے مزدوروں کو ماہانہ مقررہ اجرت کی عدم ادائیگی اور ان کے دیگر مسائل سے متعلق بریفنگ دی اور کہا کہ اکثر مزدوروں کوماہانہ بنیادوں پر مقررہ 21 ہزار روپے اجرت نہیں ملتی اور ان سے تنخواہوں میں کٹوتی ہوتی ہیں کئی مزدوروں سے 21 ہزار روپے کی ادائیگیوں کے دستخط لیے جاتے ہیں تاہم اجرت کم دی جا رہی ہے اور کارخانہ دار حکومت کے احکامات اور قوانین نظرانداز کر رہے ہیں اسی طرح ان کو صحت سلامتی سمیت دیگر مسائل کا سامنا ہے اراکین اسمبلی نے کہا کہ حکومت کی بنیادی ذمہ داری ہے کہ مزدوروں کی اجرت سمیت تمام مسائل حل کرے تاہم وہ اسمبلی کے فلور پر ان مسائل کو اٹھائینگے اور ان کیلئے بنائے گئے قوانین پر عملدرآمد کرانے کیلئے حکومت اور متعلقہ اداروں کو ان کی ذمہ داریاں یاد دلائینگے تاکہ مزدوروں کی مشکلات میں کمی آسکے

مزید :

پشاورصفحہ آخر -