لاہورمیں ایڈیشنل سیشن جج کی اہلیہ پراسرارطورپرجاں بحق

لاہورمیں ایڈیشنل سیشن جج کی اہلیہ پراسرارطورپرجاں بحق

موت اتفاقی حادثہ ہے، قانونی کارروائی نہیں چاہتے: عارف محمود

لاہورمیں ایڈیشنل سیشن جج کی اہلیہ پراسرارطورپرجاں بحق

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)پراسرار طورپر گولی چلنے سے ایڈیشنل سیشن جج عارف محمود کی اہلیہ جاں بحق ہوگئی ہیں جبکہ ایڈیشنل سیشن جج کی مداخلت کے بعد پولیس نے حراست میں لیے گئے عباس کو رہاکردیا۔ عارف محمود کا 10سالہ عباس نواب ٹاﺅن میں واقع اپنے گھر میں بندوق صاف کررہاتھاکہ اچانک گولی چل گئی جس کی زد میں آکر ایڈیشنل سیشن جج کی اہلیہ زخمی ہوگئیں ۔ نجی ٹی وی چینل کے مطابق عارف محمود کاکہناتھاکہ خاتون کو طبی امداد کیلئے جناح ہسپتال منتقل کیاگیاجہاں تین گھنٹے زندگی موت کی کشمکش میں رہنے کے بعد وہ دم توڑ گئیں ۔ ایڈیشنل سیشن جج نے پولیس کو قانونی کارروائی سے روکدیاہے اور کہاہے کہ موت اتفاقی حادثہ ہے ، بیٹے کے خلاف کارروائی نہیں کرناچاہتے اور نہ ہی پوسٹمارٹم کرائیں گے ۔ایڈیشنل سیشن جج کی مداخلت کے بعد پولیس نے تحویل میں لیے گئے 10سالہ عباس کو رہاکردیا۔

مزید : لاہور