پاکستان میں کل ’خونی چاند گرہن‘ دیکھا جا سکے گا

پاکستان میں کل ’خونی چاند گرہن‘ دیکھا جا سکے گا
پاکستان میں کل ’خونی چاند گرہن‘ دیکھا جا سکے گا

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)ماہرین فلکیات کا کہنا ہے کہ کل زمین، چاند، سورج اور مریخ کے بیک وقت ایک دوسرے کے سامنے آنے پر ’خونی چاند گرہن‘ پاکستان، آسٹریلیا، تسمانیہ اور ویلز سمیت دنیا کےکئی ممالک میں دیکھا جا سکے گا۔ پاکستان میں چاند گرہن 5گھنٹے اور18  منٹ پر محیط ہو گا جو کل دوپہر 1بج کر 16 منٹ پر شروع ہو گااور 6بج کر 34منٹ تک جاری گا، چاند گرہن ساڑھے تین بجے کے وقت اپنی انتہاء پر ہو گا اور اس دوران چاند گہرے سرخ رنگ کا نظر آئے گاجسے لاہور شہر میں بھی دیکھا جا سکے گا۔ یاد رہے اس سے قبل امریکی ادارے ناسا نے بھی 2014اور 2015میں ’بلڈ مون‘کی تصدیق کرتے ہوئے کہا تھا کہ چاند گرہن 8اکتوبر کو دیکھا جا سکے گا۔بعض حلقوں کا کہنا ہے کہ چاند کا نتہائی سرخ نظر آنا خوف کی علامت ہوتا ہے اور اس کے نظر آنے پر زمین پر کوئی بڑی تباہی پیش آ سکتی ہے، چاند کا انتہائی سرخ ہو جانا ’خونی تبدیلیوں‘ کے مشابہہ بھی سمجھا جاتا ہے تاہم مذہبی حلقوں کا کہنا ہے کہ یہ محض دقیہ نوسی باتیں ہیں اور چاند گرہن دراصل اللہ کے بنائے ہوئے ایک خصوصی نظام کے تحت ہی ہوتا ہے تاہم اس دوران اللہ کی تسبیحات کرتے رہنا چاہئے۔

مزید : ماحولیات /اہم خبریں