اقوام متحدہ کی بھارتی مظالم پر خاموشی کا کوئی جواز نہیں ،کشمیر کی صبح آزادی شہداء کے لہو سے طلوع ہو گی :شہباز شریف

اقوام متحدہ کی بھارتی مظالم پر خاموشی کا کوئی جواز نہیں ،کشمیر کی صبح آزادی ...

لاہور(جنرل رپورٹر) وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے کہا ہے کہ بھارت نہتے کشمیریوں پر ظلم و ستم کے باوجود ان سے آزادی کا پیدائشی حق کبھی نہیں چھین سکتا اور نہ ہی بھارتی حکومت گولیوں کے ذریعے کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو کچل سکتی ہے۔ وقت نے کشمیرمیں بھارتی حکومت کی ظلم اور تشدد کی پالیسی کو ناکام ثابت کر دیا ہے اور بھارت کی ظلم و تشدد کی پالیسی نے کشمیری عوام کے دلوں میں آزادی کی تڑپ کو مزید جلا بخشی ہے۔ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ جموں و کشمیر کے عوام اپنے پیدائشی حق کیلئے لازوال قربانیاں دے رہے ہیں اور اپنے خون سے نئی تاریخ رقم کررہے ہیں۔ کشمیریوں کا جدوجہد آزادی کا جذبہ سرد نہیں ہو گا اور کشمیر کی آزادی کی صبح شہدائے کشمیر کے خون سے طلوع ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ کشمیریوں کو ان کے حق خود ارادیت سے محروم رکھنا انصاف کا قتل ہے۔ نہتے کشمیریوں پر بھارتی قابض افواج کے بد ترین ظلم و ستم پر عالمی ضمیر کو بیدار ہونا ہوگا۔ اقوام عالم کی بھارتی مظالم پر خاموشی کا کوئی جواز نہیں۔ عالمی برادری کو بھارت پر مقبوضہ کشمیر میں آگ اور خون کا کھیل فوری طور پر بند کرنے کیلئے دباؤ ڈالنا چاہئے۔

لاہور(جنرل رپورٹر)وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے کہا ہے کہ راولپنڈی،لاہور سمیت پنجاب بھر میں انسداد ڈینگی کیلئے جنگی بنیادوں پر کام کیا جائے اورعوام کو ڈینگی کے مرض سے بچانے کیلئے ہر وہ اقدام اٹھایا جائے جو انسانی بس میں ہے۔اِن ڈوراور آؤٹ ڈور سرویلنس پر خصوصی توجہ دی جائے۔انسداد ڈینگی کیلئے کئے جانے والے تمام اقدامات کی موثر مانیٹرنگ کی جائے۔ڈینگی سرویلنس کا کام تیز کیا جائے اور ڈینگی کے مرض سے نمٹنے کے لئے متعلقہ ادارے او ر محکمے متحرک انداز میں اپنے فرائض سرانجام دیں۔وزیراعلیٰ شہبازشریف نے صوبائی کابینہ کمیٹی برائے انسداد ڈینگی کو ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا کہ ڈینگی سے نمٹنے کیلئے وضع کردہ پلان پر موثر عملدر آمد ہر قیمت پر یقینی بنایا جائے۔ لاہور، راولپنڈی اور دیگر شہروں میں ڈینگی کے مرض کے تدارک کیلئے تمام ضروری اقدامات اٹھائے جائیں۔متعلقہ وفاقی و صوبائی ادارے اجتماعی کاوشیں بروئے کار لاتے ہوئے اقدامات اٹھائیں۔انہوں نے کہا کہ ڈینگی کے مرض سے نمٹنے کیلئے ٹاؤن ایمرجنسی رسپانس کمیٹیوں کو فعال انداز میں کام کرنے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہسپتالوں میں مریضوں کی مکمل دیکھ بھال اور علاج معالجے پر خصوصی توجہ دی جائے۔متعلقہ اداروں کو عوام کو ڈینگی کے مرض سے بچانے کیلئے فعال اور متحرک کردار ادا کرنا ہے ۔

لاہور (جنرل رپورٹر)وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف سے فوڈ اینڈ ایگریکلچر آرگنائزیشن کے ڈائریکٹر جنرل جوزگرازینوڈیسلوا کی قیادت میں وفدنے ملاقات کی جس میں فوڈ اینڈ ایگریکلچرآرگنائزیشن اور پنجاب حکومت کے مابین زراعت کی ترقی ، چھوٹے کاشتکاروں کی خوشحالی، زرعی پیداوار بڑھانے کیلئے جدید ٹیکنالوجی کے استعمال ، بچوں میں غذائیت کی کمی پر قابو پانے ، فوڈ سیکورٹی کے شعبوں میں تعاون بڑھانے پر اتفاق ہوا۔ڈی جی فوڈ اینڈ ایگریکلچر آرگنائزیشن کی جانب سے پنجاب حکومت کو ہر ممکن تعاون کی یقین دہانی کرائی۔ ملاقات میں پنجاب حکومت اور فوڈ اینڈایگریکلچر آرگنائزیشن کا مستقبل میں اشتراک کار بڑھانے کیلئے مشترکہ کمیٹی تشکیل دینے کا فیصلہ کیا گیا اوریہ مشترکہ کمیٹی زراعت لائیوسٹاک کے شعبوں میں تعاون کے امکانات کا جائزہ لیکر فوری عملدرآمد کیلئے روڈ میپ مرتب کرے گی۔وزیر اعلی محمد شہباز شریف نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان ایک زرعی ملک ہے ، زراعت معیشت کیلئے ریڑھ کی حیثیت رکھتی ہے ۔فوڈ اینڈ ایگریکلچر آرگنائزیشن کی جانب سے زراعت کی ترقی ،زرعی پیداوار بڑھانے ، جدید ٹیکنالوجی کے استعمال کے فروغ ، نیوٹریشن ، زرعی توسیع خدمات اور دیگر شعبوں میں تکنیکی معاونت کی فراہمی کا خیرمقدم کرتے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ کاشتکاروں کو ریلیف کی فراہمی ہماری ترجیحات ہیں اور اسی مقصد کے پیش نظر چھوٹے کاشتکارکے مفاد کے تحفظ کیلئے وفاقی اور پنجاب حکومتوں نے اربوں روپے کے تاریخ ساز پیکیج دیئے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ زرعی پیداوار بڑھانے کیلئے جدید ٹیکنالوجی کا استعمال بے حد ضروری ہے اور حکومت نے جدید ٹیکنالوجی کے فروغ کیلئے ٹھوس اقدامات کئے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ عالمی کساد بازاری کے باعث ہمارے کاشتکار کو بھی نقصان کا سامنا کرنا پڑا ہے ۔ پنجاب حکومت نے کاشتکارکو ریلیف فراہم کرنے کیلئے سو ارب روپے کے خصوصی پیکیج کا اعلان کیا ہے ۔ چھوٹے کاشتکاروں کو اربوں روپے کے بلاسود قرضے بذریعے سمارٹ فون فراہم کرنے کا پروگرام بنایا گیا ہے ۔ فوڈ اینڈ ایگریکلچر آرگنائزیشن کے عہدیداران، وفاقی وزیر نیشنل فوڈ سکیورٹی سکندر بوسن، صوبائی وزراء فرخ جاوید، یاور زمان، بلال یاسین، عائشہ غوث پاشا، معاون خصوصی لائیوسٹاک ارشد جٹ، چیئرمین منصوبہ بندی و ترقیات اور متعلقہ سیکرٹریز بھی اس موقع پر موجود تھے۔

مزید : صفحہ اول