ضلع کونسل بونیر کا ماہانہ اجلاس ،محکمانہ رپورٹ پیش کی گئی

ضلع کونسل بونیر کا ماہانہ اجلاس ،محکمانہ رپورٹ پیش کی گئی

بونیر(ڈسٹرکٹ رپورٹر )ضلع کونسل بونیر کا ماہانہ اجلاس زیر صدارت ضلع نائب ناظم یو سف علی خان منعقد ہو اجس میں ضلع ناظم ڈاکٹر عبیداللہ ،محکموں کے سربراہان کے علاوہ ڈسٹرکٹ ممبران نے کثیر تعداد میں شر کت کی ،اجلاس میں محکمہ صحت کے چئیر مین حجاب اللہ اور سی اینڈ ڈبلیو کے چئیر مین افسر خان نے اپنے اپنے محکموں کے رپورٹ پیش کئے ،محکمہ تعلیم کے خوالہ سے اراکین ضلع کونسل نے شدید تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ محکمہ تعلیم سیاسی اکھاڑہ بن گیاہے ،محکمہ میں کرپشن عروج پر ہے جبکہ ضلعی حکومت کے سربراہ ثبوت مانگ رہے ہیں ۔جس پر اپوزیشن لیڈر حاجی صدیق اللہ نے ایوان سے واک اوٹ کیا ،واک اوٹ کے بعد میڈیاسے گفتگوں کرتے ہوئے حاجی صدیق اللہ ،ریاض خان ،کامران خان نے کہا کہ بونیر کی ضلعی حکومت کا اپنے ماتحت محکموں پر کوئی چیک نہیں ہے ،خصوصا محکمہ تعلیم اور محکمہ صحت شتر بے مہار ہے ،محکمہ تعلیم میں ہونے والے بے قاعدگیوں تقرریوں اور تبادلوں میں میرٹ کو پامال کیا جارہاہے انہوں نے محکمہ صحت بونیر کو ادویات کی خریداری کے لئے کروڑوں روپے جاری کرنے کے باوجودتاحال یہاں کے طبے مراکز کو ادویات میہا نہیں کی گئی ،یہاں تک کے باولے کتوں اور سانپ کے ڈسنے کی ویکسئین بھی دستیاب نہیں محکموں میں کرپشن کی نشاندہی کرنے کے باوجود اس پر ضلعی حکومت کی جانب سے کو ئی ردعمل سامنے نہیں اتا ۔ضلع کونسل کے دیگراراکین انعام الرحمان ایڈوکیٹ ،ولی الرحمان خان ،روزی شاہ ،سردار علی خان اور دیگر نے بحث میں حصہ لیا ،گل محمد خان عرف طوطا نے قرارداد پیش کرتے ہوئے کہا کہ سی پیک منصوبہ ہمارے لئے بہت اہم ہے مگر مرکزی حکومت نے جان بوجھ کر ہمارے صوبہ کو نظر انداز کیاہے ایوان نے قرارداد منظور کرلی ۔کنو نئیر یو سف علی خان نے ایوان کو بتایا کہ ہر معزز رکن وقت کی پابندی کو یقینی بنائے انہوں نے کہا کہ نئے رولز کے مطابق ڈی پی او بونیر ضلع کونسل کو اج امن وہ امان کے بارے میں بریفنگ دیں گے اجلاس کل تک کے لئے ملتوی کردیا گیا ۔ڈسٹرکٹ ہیلتھ افیسر بونیر نے ایوان کو ابتک ہونے والے کارکردگی کے بارے میں تفصیلات بتائے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر