الزامات کے خوف سے کشمیر پر موقف نہیں بدلیں گے، بھارت لائن آف کنٹرول پر فائرنگ کو سرجیکل اسٹرائیک کہہ سکتا ہے، ہم بھرپور جواب دیں گے: عبدالباسط

الزامات کے خوف سے کشمیر پر موقف نہیں بدلیں گے، بھارت لائن آف کنٹرول پر فائرنگ ...
الزامات کے خوف سے کشمیر پر موقف نہیں بدلیں گے، بھارت لائن آف کنٹرول پر فائرنگ کو سرجیکل اسٹرائیک کہہ سکتا ہے، ہم بھرپور جواب دیں گے: عبدالباسط

  

نئی دلی (مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں پاکستان کے ہائی کمشنر عبدالباسط نے کہا ہے کہ ہمیں علامتی نہیں ٹھوس اور جامع مذاکرات کرنا ہوں گے مسئلہ کشمیرحل ہوناچاہیے اور اگر یہ مسئلہ حل ہو جائے تو دیگر معاملات بھی حل ہوجائیں گے بھارت الزامات لگاکرچاہے کہ ہم مقبوضہ کشمیرپرموقف بدل لیں تویہ ممکن نہیں۔ برہان وانی کے جنازے میں ہزاروں کشمیریوں کا آناان کی جدوجہدآزادی کی گواہی ہے۔ بھارت کو اختیار ہے کہ وہ لائن آف کنٹرول پر فائرنگ کو سرجیکل اسٹرائیک کہے اگر بھارت کی جانب سے ایل او سی کی مزید خلاف ورزیاں ہوئیں تو پاکستان جواب دے گا۔ پاکستان اپنی زمین کبھی بھی دہشتگردی کیلئے استعمال نہیں ہونے دے گا۔ یقین ہے کہ 19ویں سارک کانفرنس اگلے سال پاکستان میں ہی ہوگی۔

بھارتی میگزین کو انٹرویو میں پاکستانی ہائی کمشنر عبدالباسط کا کہنا تھا کہ پاک بھارت باہمی تنازعات کے حل کے مطالبات عالمی برادری بھی کر رہی ہے لیکن بنیادی مسئلہ یہ ہے کہ بھارت مقبوضہ کشمیر پر بات ہی نہیں کرناچاہتا۔ مذاکرات باہمی احترام اور برابری کی بنیاد پر ہوں تب ہی موثر ہوں گے مذاکرات برائے مذاکرات سے کوئی نتیجہ نہیں نکلے گا ۔ ہمیں علامتی نہیں ٹھوس اور جامع مذاکرات کرنا ہوں گے اور اگر بھارت ابھی جامع مذاکرات کیلئے تیار نہیں تو ہمیں انتظارمیں کوئی قباحت نہیں صورتحال کوحقیقت پسندانہ طریقے سے دیکھنے کاوقت آگیاہے ۔

جنرل راحیل شریف کو توسیع نہیں ملے گی،نئے آرمی چیف کا فیصلہ ہوگیا، نام کا اعلان کسی بھی وقت متوقع

ضرور پڑھیں: اسد عمر کی چھٹی

انہوں نے کہا کہ برہان وانی کے جنازے میں ہزاروں کشمیریوں کا آناان کی جدوجہدآزادی کی گواہی ہے ۔ 2015 کی پاک بھارت مشترکہ قراردادمیں واضح ہے مسئلہ کشمیرحل ہوناچاہیے اور اگر یہ مسئلہ حل ہو جائے تو دیگر معاملات بھی حل ہوجائیں گے ۔ بھارت الزامات لگاکرچاہے کہ ہم مقبوضہ کشمیرپرموقف بدل لیں تویہ ممکن نہیں، پاکستان مقبوضہ کشمیر پر اپنے اصولی موقف پر کوئی سمجھوتا نہیں کرے گا۔

شریف فیملی کا بھارت میں کوئی کاروبار نہیں،عمران خان غلط بیانی کرکے قوم کو گمراہ کررہے ہیں:ترجمان

انڈیا کے سرجیکل سٹرائیک کے دعوے کے حوالے سے پوچھے گئے سوال پر عبدالباسط کا کہنا تھا کہ 29ستمبرکی رات ایل او سی پر فائرنگ ہوئی، کوئی سرجیکل سٹرائیک نہیں ، بھارت کو اختیار ہے کہ وہ لائن آف کنٹرول پر فائرنگ کو سرجیکل اسٹرائیک کہے۔سرجیکل اسٹرائیک ہوتی تو پاکستان اس کا فوری اور حسب ضرورت جواب دیتا۔ پاکستان کو اپنی ایٹمی اور عسکری صلاحیتوں پر مکمل اعتماد ہے لیکن پاکستان کبھی بھی کسی قسم کی کشیدگی میں اضافہ نہیں چاہتا اور اگر بھارت کی جانب سے ایل او سی کی مزید خلاف ورزیاں ہوئیں تو پاکستان جواب دے گا۔

پی ایس ایل کے دوسرے ایڈیشن کیلئے کھلاڑیوں کی ڈرافسٹ لسٹ جاری،ڈرافٹنگ 19اکتوبر کو ہو گی

انہوں نے کہا کہ بھارت ہر دہشتگرد حملے کا الزام فوراً پاکستان پر لگادیتا ہے حالانکہ پاکستان خود دہشتگردی کا سب سے بڑا شکار ہے، پاکستان اپنی زمین کبھی بھی دہشتگردی کیلئے استعمال نہیں ہونے دے گا۔ دہشتگردی مقامی، علاقائی اورعالمی چیلنج ہے جس سے مل کر لڑنا ضروری ہے سوائے چند ممالک کے دنیادہشتگردی کیخلاف جنگ میں پاکستان کاکردارسراہتی ہے۔

عمران خان کا مائنس زرداری کا بیان نادانی پر مبنی، میں نے نواز شریف اور الطاف حسین کو کبھی غدار نہیں کہا: بلاول بھٹو زرداری

سارک کانفرنس کے حوالے سے پوچھے گئے سوال پر انہوں نے کہا کہ یہ پہلا موقع نہیں کہ سارک کانفرنس ملتوی ہوئی ہو، سارک علاقائی تعاون کی تنظیم ہے اور اس کا پاک بھارت کشیدگی سے کوئی تعلق نہیں پاکستان کے اقوام عالم سے بہترین مراسم ہیں اور یقین ہے کہ 19ویں سارک کانفرنس اگلے سال پاکستان میں ہی ہوگی۔

مزید : قومی /اہم خبریں