پاکستان میں کرکٹ ورلڈ کپ ٹرافی کی یادگار پذیرائی

پاکستان میں کرکٹ ورلڈ کپ ٹرافی کی یادگار پذیرائی
پاکستان میں کرکٹ ورلڈ کپ ٹرافی کی یادگار پذیرائی

  


ورلڈ کپ کرکٹ ٹرافی دنیا کے سفر پر گامزن ہے دیگر ممالک سے ہوتی ہوئی ٹرافی پاکستان کے دورہ پر آئی جہاں پر شائقین کرکٹ نے ٹرافی کا بھرپور استقبال کیا اور ٹرافی کو پورے لاہور کی سیر کروائی گئی ٹرافی کی پاکستان آمد کا مقصد کرکٹ ورلڈ کپ میں شائقین کرکٹ کا جوش و جذبہ بڑھانا ہے اور جس طرح سے پاکستان میں اس ٹرافی کا والہانہ استقبال کیا گیا وہ یادگار ہے کرکٹ ورلڈ کپ تو اگلے سال کے وسط میں انگلینڈ میں شروع ہوگا مگر اس سے قبل جس طرح سے ٹرافی کا سفر جاری ہے یہ قابل تعریف بات ہے اس طرح سے پاکستان کرکٹ ٹیم کے کھلاڑیوں میں بھی اس ٹرافی کو جیتنے کا جذبہ بڑھے گا ٹرافی کا سفر ورلڈ کپ کے آغاز تک مختلف ممالک میں جاری رہے گا پاکستان کرکٹ بورڈ نے ٹرافی کی پاکستا ن آمد پر خصوصی طور پر انتظامات کررکھے تھے مگر اس کے باوجود شائقین نے جوق در جوق اس ٹرافی کا دیدار کیا اور ہر ایک کی اس موقع پر دل کی آرزو تھی کہ پاکستان اس مرتبہ ورلڈکپ میں عمدہ پرفارمنس کا مظاہرہ کرے او ر جو ٹرافی اس وقت اپنے سفر کے لئے پاکستان آئی ہے اس کو چار سال کے لئے مستقل پاکستان میں رکھا جائے۔ ورلڈ کپ میں اس مرتبہ چودہ ٹیمیں شرکت کررہی ہیں اور ان ٹیموں میں سے کوئی ایک ٹیم اس ٹرافی کی حقدار ہوگی ۔اس مرتبہ ٹرافی کو ایسے ممالک بھی بھیجا جارہا ہے جہاں کی کرکٹ ٹیمیں تو ورلڈ کپ میں شرکت نہیں کررہی مگر اس کے باوجود صرف اس لئے کہ وہاں پر بھی کرکٹ کے لئے جوش و خروش پیدا جائے ایسے گیارہ ممالک ہیں جہاں پر پہلی مرتبہ کرکٹ ورلڈ کپ کی ٹرافی سفر کرے گی او ر فیصلہ آئی سی سی کی جانب سے ایک بہت خوش آئند فیصلہ ہے اور امید ہے کہ ان ممالک میں بھی ٹرافی کے سفر سے کرکٹ کا جوش و خروش بڑھے گا اس میں کوئی شک نہیں کہ کرکٹ پوری دنیا میں مشہورکھیل ہے اور جس تیزی سے یہ کھیل پوری دنیا میں پروان چڑھ رہا ہے اور اس میں شائقین کی دلچسپی بہت تیزی سے بڑھ رہی ہے یہ قابل تعریف بات ہے پاکستان میں اس ٹرافی کو ہمیشہ کی طرح بہت زیادہ پذیرائی حاصل ہوئی بلکہ اگر یہ کہا جائے کہ اس مرتبہ پہلے سے زیادہ اس ٹرافی کی نمائش میں شائقین کرکٹ نے بڑھ چڑھ کر حصہ لیا اور اس موقع پر شائقین کرکٹ نے ٹرافی کیساتھ سیلفیاں بھی بنوائیں اور اس موقع پر اتنا رش تھا کہ ہر ایک کی تو یہ ہی کوشش تھی کہ وہ اس کو ہاتھ بھی لگائے اور اس میں دھکم پیل بھی دیکھنے میں ملی بہرحال یہ بھی ایک خوشی کا موقع تھا کہ پاکستان میں اس ٹرافی کو لایا گیا مگر اس سے زیادہ یقینی طور پر خوشی اس وقت ہوگی جب پاکستان کرکٹ ورلڈ کپ میں کامیابی حاصل کر ے گا اور اس موقع پر اس ٹرافی کی ایک مرتبہ دوبارہ پاکستان میں نمائش ہوگی جس کا شائقین کرکٹ بہت شدت کے ساتھ انتظار کررہے ہیں اور امید ہے کہ اگر پاکستان کرکٹ ٹیم نے عمدہ پرفارمنس دکھائی اور بھرپورمحنت کی تو پھر ٹرافی جیتنا مشکل نہیں ہوگا۔

مزید : رائے /کالم


loading...