لاہور بورڈ میں ادارہ جاتی کفایت شعاری کی پالیسی پر عملدرآمد جاری

لاہور بورڈ میں ادارہ جاتی کفایت شعاری کی پالیسی پر عملدرآمد جاری

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)پروفیسر چودھر ی محمد اسماعیل کی چیئرمین کے طور پر تعیناتی سے اعلیٰ و ثانوی تعلیمی بورڈ لاہور کی کارکردگی میں نمایاں بہتری آئی ہے،بروقت امتحانات کا انعقاد اور نتائج کی اشاعت سے، لاہور ڈویژن کے سرکاری و نجی تعلیمی اداروں ، والدین و طالب علموں کا بورڈ پر اعتماد بڑھاہے۔ یہ بات لاہور بورڈ کے ترجمان نے ایک بیان میں کہی۔ ترجمان نے کہا کہ چیئرمین پروفیسر چودھری محمد اسماعیل نے بورڈ میں متعدد اصلاحات متعارف کروائی ہیں جن میں امتحانی نظام میں اضافی اخراجات کو ختم کیا گیا ہے اور ادارہ جاتی کفایت شعاری کی پالیسی کو اپنایا گیا ہے جس سے مالیاتی ڈسپلن کو فروغ ملا ہے۔ اسی طرح پر چے چیک کرنے والے اساتذہ و ملازمین کی متواتر تربیت کے نظام کو شروع کیا گیا ہے اور داخلہ فیس میں اضافہ کیے بغیر امتحانی عمل میں شریک سکولوں و طالب علموں کو مختلف سہولیات مہیا کی گئی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ لاہور بورڈ کے شکایت سیل کے ذریعے اب تعلیمی ادارے اور طالب علم صرف ای ۔ میل کے ذریعے گھر بیٹھے اپنے معاملات نبٹارہے ہیں ۔

اس کے ساتھ ساتھ ملازمین کی حاضری پر نظر رکھنے کے لیے بائیو میٹرک حاضری کا جدید نظام نافذ کیا گیا ہے دوسری جانب امتحانی اسناد کی تصدیق و اجراء کے عمل کو بھی آسان بنا دیا گیا ہے تا کہ طالب علموں کے تعلیمی عمل میں کوئی رکاوٹ نہ آئے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ لاہور بورڈ ملک کا سب سے بڑا تعلیمی بورڈ ہے جس کی اعلیٰ کارکردگی سے ہر سال لاکھوں طالب علم مستفید ہوتے ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...