انڈونیشیا، زلزلہ اور سونامی کی تباہی کے انمٹ نقوش، ناقابل شناخت نعشیں ساحل سمند سے ٹکرانے لگیں

انڈونیشیا، زلزلہ اور سونامی کی تباہی کے انمٹ نقوش، ناقابل شناخت نعشیں ساحل ...

جکارتہ(آئی این پی)انڈونیشیا میں زلزلہ اور سونامی انمٹ نقوش چھوڑ گیا، سونامی کی زد میں آ کر جاں بحق ہونے والے افراد کی نعشیں (بقیہ نمبر29صفحہ12پر )

ساحل سے ٹکرانے لگیں، نعشیں ناقابل شناخت ہیں ،بدن پھول چکے ہیں۔ بین الاقوامی میڈیا کے مطابق انڈونیشیا میں پیش آنے والے زلزلے کے بعد سونامی کی زد میں آتے ہوئے اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھنے والے افراد کی نعشیں اب ساحلِ سمندر سے ٹکرانے لگی ہیں۔امدادی ٹیم کے سربراہ احمد حمیم کا کہنا ہے کہ سونامی کے ساتھ سمندر میں گم ہونے والی نعشیں اب ساحلوں سے ٹکرانے لگی ہیں، ان کی اکثریت کے بدن پھول چکے ہیں جبکہ بعض کے چہرے ناقابلِ شناخت ہیں۔

ان کا کہنا ہے کہ اب تک ان کی ٹیم نے ساحلوں سے 11 نعشیں جمع کی ہیں اور گزشتہ 7 دنوں میں 100 سے زائد نعشوں تک رسائی ہوئی ہے جبکہ ملبے تلے سے کوئی بھی شخص زندہ نہیں نکالا جا سکا۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...