پختون ایس ایف کی طلباء پر وحشیانہ تشدد کی مذمت

پختون ایس ایف کی طلباء پر وحشیانہ تشدد کی مذمت

پشاور(سٹی رپورٹر)پختون سٹوڈنٹس فیڈریشن کے مرکزی ر ہنماؤں نے یونیورسٹی کے طلبا پر گزشتہ روز وحشیانہ تشدد کی شدید مذ مت کی ہے اورکہاہے کہ حکومت طلباء کے مسائل کے حل کیلئے اقدامات اٹھا کر فیسوں میں کمی لا ئے،پی ایس ایف کے مرکزی رہنماؤں شیر محمد آفریدی اور ڈاکٹر عمران آفریدی نے کہا ہے کہ جامعہ پشاور کی انتظامیہ اور پولیس کی جانب سے پرامن طلبہ پر لاٹھی چارج اور تشدد قابل مذمت ہے۔ ایف آئی آر اور جیلوں سے طلبہ کے حوصلوں کو پست نہیں کیا جاسکتاہے،طلبہ کے حقوق کیلئے کسی بھی قربانی سے ذریغ نہیں کر ینگے۔ انہوں نے کہا کہ فیسوں میں اضافے کیخلاف پرامن احتجاج جامعہ پشاور کے طلبہ کا آئینی حق ہے جو کیسی بھی طور ان سے نہیں چھیناجاسکتاہے۔جامعہ پشاورمیں چند سالوں سے فیسوں میں اضافہ قابل قبول نہیں ہے۔انہوں نے صوبائی حکومت اورگورنر سے مطالبہ کیاکر جامعہ پشاور کے وائس چانسلر، چیف سیکورٹی آفیسر، پروسٹ، کمانڈنٹ کیمپس ڈی ایس پی اور یس یچ او کو پوری طور پر ان کے عہدوں سے ہٹا دیا جائے۔ بصورت دیگر ملک گیراحتجاج تحریک شروع کرینگے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...