حکومت پاکستان نے قطری شہزادے کی درجنوں گاڑیاں ضبط کیں تو آگے سے قطری شہزادے نے بھی زور دار جھٹکا دے دیا ، پاکستانیوں کیلئے انتہائی افسوسناک خبر آگئی 

حکومت پاکستان نے قطری شہزادے کی درجنوں گاڑیاں ضبط کیں تو آگے سے قطری شہزادے ...
حکومت پاکستان نے قطری شہزادے کی درجنوں گاڑیاں ضبط کیں تو آگے سے قطری شہزادے نے بھی زور دار جھٹکا دے دیا ، پاکستانیوں کیلئے انتہائی افسوسناک خبر آگئی 

  


دوحہ(مانیٹرنگ ڈیسک) گزشتہ دنوں حکومتِ پاکستان کی طرف سے قطری شہزادے کی درجنوں گاڑیاں ضبط کر لی گئی تھیں، جس پر اب قطری شہزادے نے ایسا فیصلہ کر لیا ہے کہ پاکستانی سن کر پریشان ہو جائیں گے۔ دی نیوز کے مطابق شہزادہ حمد بن جاسم الثانی مشرق وسطیٰ کے کلیدی رہنماؤں میں سے ایک ہیں اور ان کا شمار دنیا کے امیر ترین افراد میں کیا جاتا ہے۔ وہ لندن، نیویارک اور اٹلی سمیت کئی ممالک میں لگژری ہوٹلوں کے بھی مالک ہیں اور پاکستان کے حکومتی وفود بھی بیرون ملک دوروں کے دوران اکثر ان ہوٹلوں میں قیام پذیر ہوتے ہیں۔ شہزادہ حمد بن جاسم نے پاکستان میں بھی بڑی سرمایہ کاری کی منصوبہ بندی کر رکھی تھی لیکن گاڑیاں ضبط ہونے کے بعد ذرائع نے بتایا ہے کہ وہ اپنی اس منصوبہ بندی پر نظرثانی کر رہے ہیں اور اب ممکنہ طور پر وہ پاکستان میں سرمایہ کاری نہیں کریں گے۔

شہزادہ حمد بن جاسم کے قریبی ذرائع کا کہنا تھا کہ ’’شہزادہ حمد اور ان کی فیملی کی درجنوں گاڑیاں نیب کے سابق چیئرمین سیف الرحمان کے ویئر ہاؤس میں قانونی طور پر پارک کی گئی تھیں۔ انہیں ضبط کیا جانا بدقسمتی ہے اور پھر اس معاملے پر شہزادہ حمد کے خلاف میڈیا میں ہتک آمیز رپورٹس چلائی گئیں جو انتہائی افسوسناک عمل تھا۔ پاکستانی حکام کو اچھی طرح معلوم تھا کہ یہ گاڑیاں قانونی طور پر پارک کی گئی ہیں، اس کے باوجود انہیں ضبط کیا گیا اور پھر شہزادہ حمد کے خلاف پراپیگنڈا کیا گیا۔‘‘ ذرائع کے مطابق شہزادہ جاسم سیمنز جرمنی، ڈوشے بینک، کریڈٹ سوئس اور قطر کے پانچ بڑے بینکوں کے بڑے شیئرہولڈر ہیں اور کئی کمپنیوں کے حصص کے ذریعے پاکستان میں بھی انہوں نے کثیر سرمایہ کاری کر رکھی ہے۔ وہ اس سرمایہ کاری کو بھی ختم کرنے پر غور کر رہے ہیں۔‘‘ واضح رہے کہ شہزادہ جاسم اور ان کی فیملی کی لگ بھگ دو درجن لینڈکروزرز روالپنڈی میں سیف الرحمان کی ریڈکو ٹیکسٹائل ملز کے ویئرہاؤس سے قبضے میں لی گئیں۔سیف الرحمان قطری شاہی خاندان کے مشیر بھی ہیں۔ 

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...