شدید بارش، جام پور میں ژالہ باری ، فصلیں تباہ ،شیڈ گرنے سے محنت کش جاں بحق 

      شدید بارش، جام پور میں ژالہ باری ، فصلیں تباہ ،شیڈ گرنے سے محنت کش جاں ...

  

ملتان ‘ جام پور ‘روجھان ‘ کرم پور ‘ شاہ جمال ‘ لودھراں ( سپیشل رپورٹر ‘ نمائندگان پاکستان ) ملتان سمیت مضافاتی علاقوں میںگزشتہ روز دن بھر بارش کا سلسلہ جاری رہنے سے ہر طرف جل تھل ہوگئی ،بارش کے ساتھ ساتھ چلنے والی ٹھنڈی ہواﺅں نے موسم سرما کا آغاز کردیا ، سڑکوں اوربیشتر علاقوں میں بارش کا پانی جمع ہونے سے آمدورفعت معطل ہوکر رہ گئی ، 10ملی میٹر بارش نے واسا کو ایمرجنسی نافذ کرنے پر مجبور کردیا۔ واسا کی جانب سے نکاسی آب کیلئے امدادی کاروائیاں رات گئے تک جاری رہیں ۔اس ضمن میں گزشتہ روز ملتان سمیت مضافاتی علاقوں میںدن بھر وقفہ وقفہ سے بارش کا سلسلہ جاری رہا اور اس کے ساتھ چلنے والی ٹھنڈی ہواﺅں نے شہریوں کو موسم سرما کا احساس دلا دیا ہے ۔مذکورہ بارش سے ہر طرف جل تھل ہوگیا جبکہ شہر کی اہم سٹرکوں اور نشیبی علاقوں میں پانی جمع ہونے سے شہریوںکو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا ۔اس ضمن میں واسا ملتان کی جانب سے نکاسی آب کیلئے امدادی کاروائیوں کا سلسلہ جاری رہا جس کے بعد بیشتر علاقوں سے بارش کا پانی نکال دیا گیا جبکہ واسا ذرائع کے مطابق گزشتہ روز ہونے والی بارش ، سمیجہ آباد ڈسپوزل کے کمانڈ ایریا میں7 ملی میٹر ،کڑی جمنداں کے کمانڈ ایریا میں 6ملی میٹر چونگی نمبر 10کے کمانڈ ایریا میں25ملی میٹر،جبکہ پرانا شجاعباد وڈ کے کمانڈایریا میں8.5ملی میٹر ر یکارڈ کی گئی محکمہ موسمیات کے مطابق آئندہ چوبیس گھنٹوں کے دوران مطلع جزوی ابر آلود رہنے اور گرج چمک کے ساتھ مزید بارش کا امکان ہے ۔ ڈائریکٹر جنرل ترقیاتی ادارہ ملتان تنویر اقبال کی ہدایت پر ہفتہ کی شب اور اتوار کے روز ملتان میں ہونے والی موسلا دھار بارش کے دوران واسا میں ہائی الرٹ جاری کر دیا گیا ہفتہ اور اتوار کی تمام شب شہر بھر میں نکاسی آب کا آپریشن جاری رہا اور رات کی شفٹ ختم ہوتے ہی صبح دوسری ٹیموں نے مشینری کے ہمراہ نکاسی آب کے لیے اپنی اپنی سب ڈویژن کی سطح پر ذمہ داریاں سنبھال لی تاہم اتوار کے روز بھی وقفے وقفے سے بارش کا سلسلہ جاری رہنے پر ڈائریکٹر جنرل ایم ڈی اے تنویر اقبال نے واسا میں ایمرجنسی نافذ کردی اور سٹاف کی چھٹیاں منسوخ کر کے انہیں فوری طور پر فیلڈ میں طلب کر لیا گیا انہوں نے شہر کے مختلف علاقوں اور چونگی نمبر 9 ڈسپوزل اسٹیشن کا دورہ کرکے نکاسی آب کے انتظامات کو چیک کیا انہوں نے نے کلکٹنگ ٹینکس اور پمپ ہا¶س کا بھی معائنہ کیا اور اور تمام ڈسپوزل سٹیشنوں کو ہر صورت فری فال رکھنے کی ہدایت کی انہوں نے اس دوران شاہراوں کے ساتھ ساتھ نشیبی علاقوں سے بھی بارش کے پانی کی بروقت نکاسی کیلئے اقدامات تیز کرنے کا حکم دیا اور حضرت بہا¶الدین زکریا کے عرس کے حوالے سے زائرین کے راستوں کو ہر صورت کلیئر رکھنے کی ہدایت کی۔ ملتان سمیت میپکو ریجن میں طوفان بادوباراں نے تباہی مچا دی۔میپکو کا ترسیلی وتقسیمی نظام بری طرح سے متاثر ہوا۔ فیڈرز کی لائنیں گرنے ، کھمبے ٹوٹنے اور تاریں ٹوٹنے سے 100 سے زائد فیڈرز سے بجلی کی فراہمی بند ہو گئی۔ ہفتہ کی شام ہونے والی موسلادھار بارش اور طوفانی ہواﺅں کے بعد اتوار کی صبح بھی موسم ابر آلود رہا۔خوشگوار موسم ،ٹھنڈی ہواﺅں کے ساتھ کہیں ہلکی اور کہیں تیز بارش سے معمولات زندگی معطل رہے۔میپکو ریجن کے 9 سرکلز میں ہائی الرٹ افسروں اور ملازمین کی چھٹیاں منسوخ کر نے کے باوجود صورتحال بہتر نہ ہو سکی۔ ٹرانسفارمرز جلنے اور خراب ہونے اور سینکڑوں میٹروں کے جلنے کے باعث صارفین کی بہت بڑی تعداد بجلی سے محروم رہی۔ میپکو کے ملتان ، ڈیرہ غازی خان ،رحیم یار خان ،مظفر گڑھ سرکلز میں طوفان بادوباراں نے زیادہ تباہی مچائی۔ملتان میں 11 کے وی کے 15 جبکہ بہاول پور میں 25 فیڈرز 10 سے 12 گھنٹے بند رہے۔ جام پور تحصیل و ضلع بھر میں شدید بارشوں کا سلسلہ چوبیس گھنٹوں سے جاری بارش کے ساتھ ساتھ او¿لے بھی پڑے ہیں کپاس کی فصل تباہ ہوگئی مختلف علاقوں سے تعلق رکھنے والے کسانوں احمد بخش،سونا خاں،حضور بخش، شاہد حسین، شفقت حسین، منظور احمد، اللہ بچایا، ملک پاری خان، ملک ظہور احمد، نبی بخش ملک پیارا، ملک اکبر سمیت دیگر افراد کا کہنا تھا کہ ہم تو برباد ہو گئے ہیں اس سے پہلے ہماری فصل جعلی زرعی ادویات والوں نے تباہ کی باقی بچی کچھی کسر اللہ تعالیٰ کی طرف سے ہمارے او¿پر آن گری آگے اللہ تعالیٰ ہمیں معاف کرے۔ شھر اور گردونواح میں وقفے وقفے سے ہلکی بارش جاری رہی بارش کے باعث صدر بازار روجھان میں جگہ جگہ کیچڑ اور بارش کا پانی جمع ہوگیا جس کے باعث عوام کو گزرنے میں شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا تاہم بارش کے باعث موسم خوشگوار ہوگیا ہے ۔ جام پور اور گردنواح کے علاقوں کے علاوہ کوہ سلےمان کے پہاڑ وں پر شدےد بارش ہوئی ہے ۔ متعدد لوگوں کے مال موےشی پانی کی نذر ہو گئے۔ علاقے کے زمےنی اور مواصلاتی رابطہ کٹ گےا۔ جام پور اور گردنواح کے علاقوں مےں موسم سرما کی شدےد بارش ۔ اےک گھنٹہ سے زاہدوقت تک جاری رہنے والی بارش نے کئی کچے مکان تباہ کر دےے۔ کوہ سلےمان کے پہاڑوںمےں ہو نے والی بارش سے پچاس ہزار کےوسک رےلا پانی کا آگےا۔ ہڑند۔ لعل گڑھ ۔ برکتو۔ ٹبی لنڈان۔ گرکنہ وزےری۔ درگڑی گلابی ۔ حاجی پور کے اور مےراں پور بھکر پور کے کئی مواضعات رود کوئی کی سےلاب کی ذد مےں اگئے جہاں پرکپاس کی کھڑی فصل تباہ ہو گئی ہے۔ اورلوگوں کے مال موےشی۔ گندم سمےت دےگر ضروری اشےاءپانی مےں بہہ گئی ہےں۔ علاقہ پچادھ کے لوگوں کو ذمےنی اور مواصلاتی رابطہ کٹ گےاہے۔ شہرےوں شاہنواز ۔ مےر محمد خان نے وزےر اعلی پنجاب اور ڈپٹی کمشنر راجن پور سے فوری طور پر رےلےف فراہم کرنے کا مطالبہ کےا ہے۔ کرم پور اور گردو نواع میں وقفہ وقفہ سے بارش جارہی ۔ بارش سے سردی میں اضافہ ہو گیا ۔ کیچڑ ہونے کی وجہ سے کئی موٹر سائیکل سوار گر کر زخمی ہو گئے ۔ بارش کی وجہ سے مکئی ،دھان،اور کماد کی فصل کو نقصان پہنچا ہے ۔ شاہ جمال اور گر دو نواح میں گزشتہ شب سے شروع ہو نے والی بارش دن بھر جاری رہی۔ مسلسل بارش کے باعث نہ صرف فصلات کو شدید نقصان کا سامنا ہے بلکہ کچے مکان،چھتیں اور چھپرے گرنے کی اطلاعات ہیں۔ با رش کے با عث جا نو رو ں کا شےڈ گر نے سے ساٹھ سا لہ شخص جا ں بحق ہوگیا ر ےسکےو ذ را ئع کے مطا بق مسہ کو ٹہ پل کہر و ڑ پکا کے قر ےب اسلم خا ن کے کھو ہ پر با رش کی و جہ سے جا نو رو ں کا شےڈ گر نے سے ا ما م بخش ولد ا للہ ڈ تہ سا ٹھ سا لہ مو قع پر ہی جا ں بحق ہو گےااور ا ےک شخص ز خمی ہو گےا جسے ر ےسکےو 1122 نے طبی ا مد اد د ی ۔ عبدالحکیم میں رم جھم کے بعد موسم تبدیل ،گرمی سے مرجھائے چہرے کھل اٹھے،تفصیل کے مطابق پنجاب کے دیگر علاقو ں کی طرح عبدالحکیم میں بھی سرما کی پہلی بارش کے ساتھ ہی گرمی ختم ہوگئی موسم سرد ہوگیا صبح سے رم جھم کا شروع ہونیوالا سلسلہ دن بھرجاری رہا،تاہم بازاروں میںپھسلن کے سبب عوام الناس کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑاتاجرطبقہ نے انتظامیہ سے اپیل کی ہے کہ بارش کے سبب گلیوں و بازاروں اور نشیبی مقامات پر ٹھہرا ہوا پانی فوری نکالا جائے ۔ 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -