ڈینگی بے قابو، کوئٹی میں بھی پہنچ گیا، راولپنڈی میں بچے سمیت 2مریض چل بسے 

ڈینگی بے قابو، کوئٹی میں بھی پہنچ گیا، راولپنڈی میں بچے سمیت 2مریض چل بسے 

  

راولپنڈی،کوئٹہ (این این آئی،مانیٹرنگ ڈیسک)ڈینگی مچھر نے ملک بھر میں اپنے پر پھیلانا شروع کر دئے، کوئٹہ میں بھی پانچ مریض سامنے آگئے۔ راولپنڈی میں متاثرہ مریضوں کی تعداد چھ ہزار سات سو سے تجاوز کر گئی۔  راولپنڈی میں ایک ہی وقت میں ڈینگی سے دو افراد جاں بحق ہوگئے، تفصیلات کے مطابق راولپنڈی کے ہسپتالوں میں 50 سالہ صدیقی چوک کا رہائشی شبیر ڈینگی سے جاں بحق ہوگیا جبکہ دو سالہ مصریال روڈ کا رہائشی بچہ ساجد ڈینگی کی وجہ سے زندگی کی بازی ہار گیا۔ گزشتہ چوبیس گھنٹوں میں مزید 160 مریضوں میں ڈینگی وائرس کی تصدیق ہوگئی،ڈینگی سے متاثرہ مریضوں کی مجموعی تعداد 6638 ہوگئی ہے۔راولپنڈی میں محکمہ صحت اور ضلعی انتظامیہ ڈینگی مچھر کے سامنے بے بس نظر آنے لگی ہے۔ متاثرہ مریضوں کی مجموعی تعداد چھ ہزار ساتھ سو سے بھی زائد ہو چکی ہے۔لاہور، ملتان، فیصل آباد، گوجرانوالہ اور دیگر کئی شہروں میں بھی سینکڑوں مریض سامنے آ گئے ہیں جبکہ خیبر پختونخوا میں بھی ڈینگی وبا کی شکل اختیار کر گیا ہے۔پشاور میں مزید تیرہ افراد میں ڈینگی وائرس کی تصدیق ہو گئی۔ صوبے میں اب تک چار ہزار تین سو سے زائد کیس رپورٹ ہو چکے ہیں۔ادھر کراچی میں ڈینگی بے قابو ہونے لگا ہے۔ مزید 139 افراد وائرس کا شکار ہوگئے ہیں۔ متاثر ہونے والوں کی تعداد چار ہزار سے بھی زائد ہو گئی ہے۔ سندھ بھر میں ڈینگی سے چودہ افراد زندگی کی بازی ہار چکے ہیں۔ اسلام آباد کے شہری اقبال نے ایم سی آئی کے ملازم کو یرغمال بنا لیا اور تھپڑ مارا۔ ملازم نے تھانہ سبزی منڈی میں مقدمہ درج کروا دیا،راولپنڈی میں گھر سے ڈینگی لاروا برآمد کرلیا گیا۔ سیکریٹری ہیلتھ محمد عثمان نے بتایا کہ راولپنڈی میں آئی جے پی روڈ پر چیکنگ کے دوران ایک گھر کے فریج کے ٹرے، کچن ایریا، پانی کی ٹنکی اور مختلف حصوں سے ڈینگی لاروا ملا ہے جو ڈینگی وائرس میں اضافے کا باعث ہے۔انہوں نے بتایا کہ جس گھر میں لاروا برآمد ہوا وہاں کے رہائشیوں نے گھر کی تلاشی دینے سے انکار کر دیا تھا، گھر میں ڈینگی کے مریض ہونے کے باوجود تعاون سے انکار ہمسایوں کو بھی خطرے میں ڈالنے کے مترادف ہے۔ 

ڈینگی

مزید :

پشاورصفحہ آخر -