کچھ کھلاڑی کارکردگی دکھانے  میں سنجیدہ نہیں ہیں،رمیز راجہ

 کچھ کھلاڑی کارکردگی دکھانے  میں سنجیدہ نہیں ہیں،رمیز راجہ

  

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) رمیز راجہ نے نیشنل ٹی ٹوئنٹی ٹورنامنٹ میں شریک کھلاڑیوں کے رویہ پر سوالیہ نشان ثبت کرتے ہوئے کہا ہے کہ بعض کھلاڑی کارکردگی دکھانے میں قطعی سنجیدہ نہیں ہیں۔ کئی ٹیمیں اپنی اصل اہلیت کے مطابق کارکردگی سے محروم ہیں جبکہ کھلاڑیوں کا رویہ بھی انتہائی عجیب ہے جن میں سے کچھ کو کھیلنے میں ہی کوئی دلچسپی نہیں جبکہ ایک،دو محض فیور مل جانے کی خاطر ایونٹ میں شریک ہیں کیونکہ کچھ یہ بات جانتے ہیں کہ کسی بڑی کامیابی کے بغیر بھی انہیں قومی ٹیم کی نمائندگی کا موقع مل جائے گا۔

اور کچھ اس حقیقت سے واقف ہیں کہ کسی بھی طرز کی کارکردگی ان کی ٹیم میں واپسی کا باعث نہیں بن سکے گی۔

 اور اس رویہ کے ساتھ کھیلا گیا کوئی بھی ٹورنامنٹ کامیاب ثابت نہیں ہو سکتا ہے۔ انہوں نے ڈومیسٹک کرکٹ کیلئے مستحکم کرکٹرز کی تلاش کو سب سے بڑا چیلنج قرار دیتے ہوئے کہا کہ فی الوقت کھیل کا جذبہ اور موثر باڈی لینگویج ناردرن ریجن کی مہم جوئی کا حصہ ہے جو اپنی عمدہ کارکردگی کی بدولت ہر میچ جیتنا چاہتی ہے جبکہ دیگر ٹیموں میں یہ وصف دکھائی نہیں دیتا۔ رمیز راجہ نے ناردرن کو ایونٹ کی فیورٹ ٹیم قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس سائیڈ میں کھیل کے بڑے نام محض دکھاوے کیلئے شامل نہیں بلکہ وہ جیت کیلئے کھیل رہے ہیں اور سب سے بڑھ کر یہ کہ انہوں نے ڈومیسٹک کرکٹ کو احترام کا درجہ دینے کی کوشش کی ہے جو زیادہ اہمیت کا حامل پہلو ہے۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -