غداری مقدمہ کا مدعی پی ٹی آئی کا عہدیدار، کریمنل ریکارڈ یافتہ نکلا، تحریک انصاف کا بدر رشید سے اظہار لا تعلقی، بغاوت کا مقدمہ احمقانہ حرکت: عمران خان 

غداری مقدمہ کا مدعی پی ٹی آئی کا عہدیدار، کریمنل ریکارڈ یافتہ نکلا، تحریک ...

  

اسلام آباد،لاہور(جنرل رپورٹر، کرائم رپورٹر، نیوز ایجنسیاں) وزیراعظم عمران خان نے نواز شریف اور لیگی ارکان کیخلاف ایف آئی آر کے اندراج کے معاملے پر واضح کیا کہ اس سے حکومت کا کوئی تعلق نہیں۔نجی ٹی وی کے مطابق یہ اہم معاملہ وفاقی کابینہ کے اجلاس میں وزیراعظم کے سامنے اٹھایا گیا اور اس پر بحث کی گئی۔ وزیراعظم نے واضح اور دوٹوک موقف اختیار کرتے ہوئے کہا حکومت سیاسی انتقا م کی حامی ہے نہ ہی ن لیگی رہنماؤں کیخلاف بغاوت کی ایف آئی آر سے کوئی تعلق ہے۔ذرائع کے مطابق دوران اجلاس وزیراعظم عمران خان نے بتایا جب مجھے مقدمے کا علم ہوا، اس وقت میں سالگرہ کا کیک کاٹ رہا تھا۔ کابینہ ارکان کی ایف آئی آر معاملے میں مداخلت نہ کرنے کی تجویز دی،تاہم شیریں مزاری اور فواد چودھری سمیت کئی وزرا ء نے مقدمے پر مختلف رائے دی۔وفاقی وزیر انسانی حقوق شیریں مزا ر ی کا کہنا تھا مقدمہ بنیادی انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہے۔ مقدمے سے ہماری پارٹی کو بھی نقصان پہنچ رہا ہے جبکہ فواد چودھری کا کہنا تھا غداری جیسے مقدمات پارٹی پالیسی کیخلاف ہیں۔ کابینہ اجلاس میں موجو د بعض وفاقی وزرا نے بغاوت کا مقدمہ ختم کرنے کی مخالفت کی۔دریں اثناوفاقی وزیر فواد چوہدری  نے گزشتہ روز وزیر اعظم عمران خان سے ملاقات کی۔ فواد چوہدری نے بتایا ملاقات کے دورا ن وزیر اعظم نے پوچھا بغاوت کامقدمہ کس نے درج کرایا، اپوزیشن والے تو چور ہیں ہم نے ان کو باغی نہیں بنانا، ملاقات میں سیاسی صورتحال،اپوزیشن کی حکومت مخالف تحر یک پر گفتگو کی گئی اور(ن) لیگی قیادت کیخلاف بغاوت کے اندراج مقدمے کا معاملہ بھی زیر بحث آیا۔ وزیر اعظم نے 3سابق جرنیلوں،وزیراعظم آزادکشمیرپربغاوت کامقدمے کو احمقانہ حرکت قرار دیا، بغاوت کیس پر وزیراعظم نے سخت ناپسندیدگی کا اظہار کیا۔دریں اثنا قائدپاکستان مسلم لیگ (ن) سابق وزیراعظم نواز شریف، وزیر اعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر سمیت مسلم لیگ (ن) کی پوری قیادت کیخلاف بغاوت کا مقدمہ درج کرانیوالا پی ٹی آئی کا تنظیمی عہدیدار اور کرمنل ریکارڈ یافتہ نکلا، بدر رشید  ہیرا لاہور میں پی ٹی آئی یوتھ ونگ راوی ٹاؤن کا صدر ہے۔ دوسری طرف بد رشید کیخلاف ایک درجن کے قریب مختلف نوعیت کے مقدمات درج ہیں، اس حوالے سے پاکستان تحریک انصاف کا نواز شر یف اور لیگی قیادت پر مقدمے کے اندراج سے لاتعلقی کا موقف غلط نکلا، پولیس کے مطا بق بدر رشید تحریک انصاف کی جانب سے یوسی چیئرمین کا الیکشن بھی لڑچکا ہے۔دوسری طرف گورنر ہاؤس نے(ن) لیگ کے قائدین کیخلاف مقدمہ کے مدعی سے لاتعلقی کا اظہار کر دیا۔ ترجمان گورنر پنجاب کا کہنا ہے بغاوت کے مقدمہ کے مدعی کا گورنر پنجاب سے کسی قسم کا کوئی تعلق نہیں، پنجاب بھر سے ہزاروں افراد گورنر پنجاب سے ملاقات کرتے ہیں، ملا قا ت کیلئے آنیوالوں کا تصاویر بنانا معمول کی بات ہے، چودھری سرور سیاست میں وضعداری کے قائل ہیں، مخالفین کیخلاف کسی مقدمہ یا اس کی حوصلہ افزائی کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔ اس حوالے سے معاملے پر ترجمان پولیس کا کہنا ہے کہ تھانہ شاہدرہ میں مقدمہ ریاست یا کسی ریاستی ادارے کی جانب سے درج نہیں بلکہ یہ مقدمہ ایک شہری بدر رشید کی درخواست پر درج کیا گیا، ثبوت ملے تو کارروائی ہوگی، انصاف کی فراہمی کو ہر صورت یقینی بنایا جائیگا۔خیال رہے لیگی قائد اور مریم نواز سمیت مسلم لیگ ن کی قیادت اور درجنوں سینئر رہنماؤں کیخلاف بغاوت کا مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ لاہور کے تھانہ شاہدرہ میں درج ایف آئی آر میں غداری اور دیگر دفعات لگائی گئی ہے۔

مدعی غداری مقدمہ

مزید :

صفحہ اول -