بغاوت کا مجرم تو اس  وقت دوبئی میں ہے

      بغاوت کا مجرم تو اس  وقت دوبئی میں ہے

  

جماعت اسلامی پاکستان کے مرکزی رہنما امیر العظیم نے لیگی قیادت پر بغاوت کے مقدمے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہم نہیں سمجھتے ہیں کہ اپوزیشن نے کوئی ایسا اقدام کیا ہے کہ جس کی وجہ سے ان پر بغاوت کے مقدمات قائم کئے جائیں ویسے بھی حکومت کی طرف سے ان مقدمات کے بعد اپوزیشن کو عوام کی طرف سے ہمدردی مل جائے گی ہماری نظر میں تو وہ شخص بغاوت کا مجرم ہے جو کہ اس وقت دوبئی میں ہے۔وہ ایشو آف دی ڈے میں اظہار خیال کررہے تھے۔ان کا کہنا تھا کہ جس شخص کو عدالت کی طرف سے باقاعدہ بغاوت  کا مجرم قرار دیا گیا ہے اس پر ہی یہ مقدمہ بنتا ہے اپوزیشن پر حکومت نے یہ مقدمہ بنا کر کوئی اچھا کام نہیں کیا ہے حکومت کواس کو فی الفور واپس لینا چاہئے۔

لیاقت بلوچ

مزید :

صفحہ اول -