ہنگو میں رات گئے شر پسندوں کی کارروائی،صحافیوں کی گاڑیاں نذر آتش

ہنگو میں رات گئے شر پسندوں کی کارروائی،صحافیوں کی گاڑیاں نذر آتش

  

ہنگو (بیورو رپورٹ)ہنگو میں رات گئے شر پسندوں کی کاروائی، ہنگو کے مقامی  صحافیوں  کی گھر سے باہر کھڑی گاڑیاں نزر آتش کر دی گئی،ملزمان گاڑیوں کو آگ لگانے کے بعد فرار،پولیس اور ریسکیو 1122 نے موقعہ پر پہنچ کر ریسکیو آپریشن کیا،واقعے کو باریک بینی سے دیکھ رہے ہیں،جلد ملزمان گرفتار ہونگے۔ ڈی پی او شاہد احمد خان،ہمارے خاندان کو مسلسل جانی و مالی نقصان پہنچایا جا رہا ہے،انتظامیہ اور ادارے نوٹس لیں،زاہد مصری خان۔تفصیلات کے مطابق ہنگو سٹی کے علاقے علی آباد میں ہنگو کے مقامی  صحافیوں زاہدمصری،شکیل،عمر فاروق کے گھر کے سامنے ان کی کھڑی تین گاڑیوں کو نا معلوم افراد نے آگ لگا دی جس سے ایک گاڑی مکمل طور پر جل گئی جبکہ دیگر کو شدید نقصان پہنچا واقعے پر ریسکیو 1122 موقعہ پر پہنچی اور آگ پر قابو پایا۔واقعہ کے بعد ملزمان فرار ہو گئے۔ڈپٹی کمشنر منصور ارشد اور ڈی پی او شاہد احمد خان نے علی آباد پہنچ کر واقعہ کی معلومات حاصل کی۔انہوں نے متاثرہ صحافیوں سے اظہار افسوس کرتے ہوئے جلد ملزمان کی گرفتاری کا یقین دلایا۔ڈی پی او شاہد احمد خاں نے صحافیوں کو یقین دلایا کہ رپورٹ درج کر کے ملزمان تک پہنچنے کے لیے ہر زاویے سے تحقیقات شروع کر دی ہیں اور جلد ملزمان قانون کی گرفت میں ہونگے۔دوسری طرف متاثرہ صحافیوں کا کہنا  تھاکہ ہمارے والد مصری خان اورکزیی کو شہید کیا گیا اور کئی بار ہماری نیوز ایجنسی کو آگ لگا کر ہمیں لاکھوں روپے کا نقصان پہنچایا گیا۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ نہ صرف ملزمان کو گرفتار کیا جائے بلکہ لاکھوں کے نقصانات کا بھی ازالہ کیا جائے۔ دوسری طرف ہنگو کے صحافیوں نے ڈی پی او سے ملاقات کی اور ملزمان کی گرفتاری کا مطالبہ 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -