پاکستان نے سفارشات پر عملدرآمد رپورٹ ایف اے ٹی ایف کو ارسال کردی

پاکستان نے سفارشات پر عملدرآمد رپورٹ ایف اے ٹی ایف کو ارسال کردی
پاکستان نے سفارشات پر عملدرآمد رپورٹ ایف اے ٹی ایف کو ارسال کردی

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان نے سفارشات پر عملدرآمد رپورٹ ایف اے ٹی ایف کو ارسال کردی ،رپورٹ میں ستمبر 2018 سے ستمبر 2020 تک کی کارکردگی کاذکر ہے۔

رپورٹ کے مطابق یکم اکتوبرسے منی لانڈرنگ کے نئے قوانین نافذکئے گئے،منی لانڈرنگ میں ملوث کمپنیزپر10 کروڑکاجرمانہ عائدکیا جاسکتا ہے،نئے قوانین کے تحت کمپنیوں میں مشکوک ٹرانزیکشنزپرکارروائی ہوگی،کمپنیوں میں بےنامی شیئرہولڈرزکامکمل خاتمہ ہوگا۔

رپورٹ میں مزید کہاگیا ہے کہ کمپنی کا 25 فیصدشیئرہولڈر بےنامی نہیں رہ سکتا،کمپنی کے 25 فیصدشیئرزکے مالک کوسرمایہ ظاہرکرناہوگا، رپورٹ کے مطابق مشکوک ٹرانزیکشنزپرکمپنی کے سی ای اواورسی ایف اوذمہ دارہوں گے،متعلقہ آڈیٹر،اکاؤنٹنٹ،مالیاتی مشیرکومشکوک ٹرانزیکشنز کی نشاندہی کرناہوگی۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -