امریکی سینیٹر کارڈن کا ایران جوہری معاہدے کی مخالفت کا اعلان

امریکی سینیٹر کارڈن کا ایران جوہری معاہدے کی مخالفت کا اعلان
امریکی سینیٹر کارڈن کا ایران جوہری معاہدے کی مخالفت کا اعلان

  


واشنگٹن (اے پی پی) امریکی ریاست میری لینڈ سے تعلق رکھنے والے ڈیموکریٹک سینیٹر بن کارڈن نے ایران کے جوہری پروگرام سے متعلق معاہدے کے خلاف ووٹ دینے کا اعلان کیا ہے۔

ذرائع ابلاغ کے مطابق کارڈن سینیٹ امورِ خارجہ کمیٹی کے رینکنگ رْکن ہیں جن کا بہت ہی بااثر سینیٹروں میں شمار ہوتا ہے اور ان کے بیان سے معاہدے کی مخالفت میں ووٹ دینے والے باقی ارکان پر اثر پڑ سکتا ہے۔ اخبار ’واشنگٹن پوسٹ‘ میں شائع ہونے والے ایک مضمون میں کارڈن نے کہا کہ بہت سوچ بچار کے بعد وہ اِس نتیجے پر پہنچے ہیں کہ ایران کے ساتھ طے ہونے والا مشترکہ مربوط پلان آف ایکشن ایران کے جوہری پروگرام کو قانونی جواز فراہم کرتا ہے۔

کارڈن نے یہ بھی لکھا کہ 10 سے 15 برس کے بعد ایران کے پاس یہ آپشن ہوگا کہ وہ ایندھن کی افزودگی کو تیز کرکے، تھوڑے ہی وقت کے اندر اندر جوہری بم تیار کر سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایوان میں رائے دہی کا دارومدار اپنے ضمیر کی آواز پر ہونا چاہئے نہ کہ پارٹی کے وفاداری کی بنیاد پر۔

مزید : بین الاقوامی


loading...