مقبوضہ کشمیر ٗ سیلاب کے دوران مسیحا بننے والے دو بھائی فاقوں کی زد میں آگئے

مقبوضہ کشمیر ٗ سیلاب کے دوران مسیحا بننے والے دو بھائی فاقوں کی زد میں آگئے

سری نگر (اے این این) مقبوضہ کشمیر میں گزشتہ برس آنے والے سیلاب کے دوران مسیحا بن کر دوسروں کی زندگی بچانے والے پانپور کے دو بھائی فاقوں کی زد میں آگئے ٗ حکومت کی جانب سے اعلان کردہ معاوضہ تاحال نہ مل سکا ٗ دونوں بھائیوں نے اپنی جانیں داؤ پر لگاکر 500 افراد کو کشتیوں کے ذریعے محفوظ مقامات پر منتقل کیا تھا ٗ سیلاب سے مکان تباہ اور مال مویشی مرگئے تھے ۔ تفصیلات کے مطابق پانپور کے دو بھائی جنہوں نے 2014ء کے تباہ کن سیلاب کے دوران سینکڑوں افراد کی جانیں بچائیں آج خود پائی پائی کے محتاج ہیں کیونکہ انہیں نہ ہی حکومت کی جانب سے معاوضہ فراہم کیا گیا اور نہ ہی کسی غیر سرکاری تنظیم نے ان کی طرف کوئی دھیان دیا۔درنگہ بل پانپور کے رہنے والے دو بھائی ہلال احمد کھانڈے اور بشیر احمد کھانڈے ایسے لوگ ہیں جو سیلاب سے پہلے کشتیوں کے ذریعے نالوں سے ریت اور باجری وغیرہ نکال کر اس کو فروخت کر کے اپنے گھر کا نظام چلاتے تھے اور اس طرح ان کے گھر کا چولہاجلتا تھا ۔

مزید : عالمی منظر


loading...